حزب اللہ دہشت گرد اور ایران کی ایجنٹ ہے:امریکی ذمے دار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امریکی ایوان نمائندگان میں ری پبلیکن کے ایک سینیر رہ نما اور رکن کانگریس نے لبنانی حکومت میں حزب اللہ کی مسلسل موجودگی سے عدم اطمینان کا اعلان کیا۔

اسٹینی ہوئر نے کہا ہے کہ حزب اللہ لبنان میں قیام امن کی راہ میں ایک بڑی رکاوٹ ہے۔ حزب اللہ ملیشیا ایک دہشت گرد گروپ اور ایران کی ایجنٹ ہے۔ انہوں‌ نے کہا کہ حزب اللہ کی عسکریت پسندی کی وجہ سے اسے دہشت گرد قرار دیا جانا چاہیے۔ یہ تنظیم ایران کے لیے پراکسی جنگ لڑ رہی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ خطے کے ممالک اور عالمی برادری کو حزب اللہ کی ایران کے لیے پراکسی جنگ روکنا ہوگی۔

امریکی عہدیدار نے کہا کہ ایک سینیر سماجی اور سیاسی رہ نما لقمان سلیم کے قتل سے لبنان کو ناقابل تلافی نقصان پہنچا ہے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ لبنانی سیکیورٹی فورسز نے لبنان کے سیاسی اور سماجی کارکن لقمان سلیم کو جو حزب اللہ کے ایک نقاد کی حیثیت سے جانےجاتے تھے کے قتل کی تصدیق کرتے کہا ہے کہ انہیں ان کی گاڑی میں گولیاں مار کر قتل کیا گیا ہے۔ مقتول کے اہل خانہ نے لقمان سلیم کے قتل کی ذمہ دار حزب اللہ پر عاید کی ہے۔



مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں