.

سعودی طالب علم کی جانب سے برطانوی شہری کی جان بچانے پر مملکت کے سفیر کی ستائش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

برطانیہ میں سعودی عرب کے سفیر شہزادہ خالد بن بندر بن سلطان نے بریسٹن میں سعودی طالب علم ترکی الشمری کو بھرپور طور پر سراہا ہے۔ مذکورہ طالب نے دلیری کا مظاہرہ کرتے ہوئے ایک برطانوی شہری کو ڈوبنے سے بچایا تھا۔ برطانوی عوام نے اس انسان دوست جذبے پر الشمری کو خراج تحسین پیش کیا ہے۔

سعودی سفیر نے الشمری سے ٹیلی فون پر رابطے میں باور کرایا کہ اس کا یہ قیمتی عمل سعودی معاشرے کی اقدار اور ثقافت کی عکاسی کرتا ہے۔ سفیر نے برطانوی شہریDean Lowe کو ڈوبنے سے بچانے پر الشمری کی بہادری کی تعریف کی۔

برطانیہ میں سعودی عرب کی ثقافتی خاتون اتاشی ڈاکٹر امل فطانی نے بھی سعودی طالب علم ترکی الشمری کے عمل کو قابل افتخار قرار دیا۔ خاتون اتاشی کے مطابق انسانی جان بچانے کا یہ واقعہ بیرون ملک تعلیم حاصل کرنے والے سعودی طلبہ کے واسطے مثبت اور امتیازی اقدار کا نمونہ ہے۔

ترکی الشمری سینٹرل لنکا شائر یونیورسٹی کا طالب علم ہے۔ وہ بریسٹن میں دریائے ریبل کے نزدیک موجود تھا کہ اس دوران اسے دریا میں پھنسے ہوئے برطانوی شہری ڈین لوو کی جانب سے جان بچانے کی اپیل سنائی دی۔ اس پر الشمری نے فوری طور پر دریا میں کود کر برطانوی شہری کی جان بچائی۔

برطانوی شہری کے اہل خانہ نے سعودی طالب کا بھرپور شکریہ ادا کیا۔ ڈین لوو کی اہلیہ کا کہنا ہے کہ " ترکی الشمری ایک ہیرو اور خوب صورت آدمی ہے۔ اس نے میرے شریک حیات کی جان بچائی۔ وہ اب تا حیات ہمارا دوست بن گیا ہے"۔

بیرون ملک زیر تعلیم سعودی طالب علموں کی جانب سے وقتا فوقتا اس طرح کے انسان دوست مواقف کا عملی مظاہرہ سامنے آتا رہتا ہے۔