.

کرونا کیسز سامنے آنے کے بعد سعودی عرب میں 10 مساجد سیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی وزارت مذہبی امور کی طرف سے جاری ایک بیان میں‌ کہا گیا ہے کہ مملکت میں 10 مساجد میں کرونا کیسز سامنے آنے کے بعد 10 مساجد کو سیل کردیا گیا ہے۔

وزارت مذہبی امور کے مطابق الدم گورنری میں ایک مینیجنگ ڈائریکٹر اور چھ دیگر ملازمین سمیت کم سے کم 10 افراد کے کرونا کا شکار ہونے کے بعد شہریوں کی جانوں کے تحفظ کے پیش نظر 10 مساجد کو سیل کردیا گیا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ کرونا کیسز سامنے آنے کے بعد الریاض میں پانچ، حریملا گورنری میں تین اور افلاج اور الدم میں ایک ایک مسجد کو سیل کیا گیا ہے۔ باحہ میں المندق کےمقام پر بھی ایک مسجد کو سیل کیا گیا ہے۔ ایک مسجد کو مشرقی دمام، تین کو شمالی سرحد کے قریب سیل کیا گیا۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ بعض مساجد کو 24 اور بعض کو 48 گھنٹوں کے لیے بند کیا گیا ہے۔ ساتھ ہی انتظامیہ سے مساجد میں جراثیم کش اسپرے جاری رکھنے کی ہدایت کی گئی ہے۔