اسرائیل:کووِڈ-19کی ویکسی نیشن مہم میں تیزی،مارچ میں ریستوران دوبارہ کھولنے کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

اسرائیل میں کووِڈ-19 کی ویکسین لگانے کی مہم تیزی سے جاری ہے اور حکومت نے 9مارچ کو ریستوران دوبارہ کھولنے کا اعلان کیا ہے۔

اسرائیل میں اب تک 41 فی صد سے زیادہ افراد کو امریکی کمپنی فائزرکی ویکسین کا ایک ٹیکا لگایا جاچکا ہے۔حکومت نے کہا ہے کہ کووِڈ-19 کی ویکسین لگانے کی اس مہم اور23 فروری کو جراثیم کش سپرے کے بعد ہوٹلوں اور جِم خانوں کوجزوی طور پر دوبارہ کھول دیا جائے گا۔

اسرائیل کے محکمہ انسداد وبائی امراض کے رابطہ کار نیشمین ایش کا کہنا ہے کہ ’’ہوٹلوں کے ڈائننگ روم ، ریستوران اور کیفے اس کے دو ہفتے کے بعد 9 مارچ کو کھولے جائیں گے۔‘‘

انھوں نے وائی نیٹ ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ’’ہم بتدریج اورمحتاط طریقے سے ریستورانوں اور ہوٹلوں کو دوبارہ کھول رہے ہیں تاکہ ملک میں ایک مرتبہ پھر کرونا وائرس کی نئی لہر نہ آجائے گی اور دوبارہ لاک ڈاؤن نہ لگانا پڑے۔‘‘

اسرائیل نے گذشتہ ہفتے تیسرے لاک ڈاؤن کے خاتمے کا اعلان کیا تھا۔اسرائیلی حکام کا کہنا ہے کہ اسی ماہ ملک کی قریباً 30 فی صد آبادی کو کروناوائرس کی ویکسین کے دو ٹیکے لگا دیے جائیں گے۔

اسرائیلی وزیراعظم بنیامین نیتن یاہو کرونا وائرس کی وبا سے نمٹنے کے لیے اقدامات کو اپنی کامیابی کے طور پر پیش کررہے ہیں۔ وہ شہریوں کو ویکسین لگانے کی مہم کو کامیاب بنانے پر زوردے رہے ہیں اورانھوں نے اس کو 23 مارچ کو ہونے والے پارلیمانی انتخابات میں جیت کے لیے مرکزی نکتہ قرار دے رکھا ہے۔وہ ان انتخابات میں کامیابی کی صورت میں اسرائیل کے پانچویں مرتبہ وزیراعظم بن سکتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں