.

عراق :عین الاسد ائیربیس پر تین کاروں سے راکٹ حملہ؛ سی سی ٹی وی فوٹیج

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراق کے مغربی صوبہ الانبار میں واقع عین الاسد ائیربیس پر راکٹ حملے کی کلوز سرکٹ کیمرے کی ویڈیو فوٹیج سامنے آئی ہے۔اس کے مطابق اس حملے میں تین گاڑیاں استعمال کی گئی ہیں اور ان سے اس فوجی اڈے پر کاتیوشا راکٹ فائر کیے گئے ہیں۔اس اڈے پر عراقی اور امریکا کی قیادت میں اتحادی فورسز کے فوجی تعینات ہیں۔

امریکی کی قیادت میں اتحاد کے ترجمان کرنل وین ماروٹو کے مطابق بدھ کی صبح سات بج کر بیس منٹ پر عین الاسد کے فوجی اڈے پر دس راکٹ داغے گئے تھے۔

ترجمان کے مطابق اس حملے کے دوران میں اتحادی فورسز کے ساتھ کنٹریکٹر کے طور پرکام کرنے والا ایک امریکی شہری دل کا دورہ پڑنے سے ہلاک ہوگیا ہے۔ بعد میں امریکی محکمہ دفاع پینٹاگان نے بھی اس کی موت کی تصدیق کی ہے۔

عراق سے العربیہ کے نمایندے نے بتایا ہے کہ صوبہ الانبار میں واقع قصبے البغدادی سے ایک میزائل لانچر پکڑا گیا ہے۔البغدادی امریکی فوج کے زیراستعمال عین الاسد فوجی اڈے کے نزدیک واقع ہے۔

واضح رہے کہ امریکا نے گذشتہ ہفتے عراق اور شام کے درمیان واقع سرحد پر ایران کی حمایت یافتہ ملیشیا کے ٹھکانے کو فضائی حملے میں نشانہ بنایا تھا۔اس کے بعد عراق میں امریکا کی کسی تنصیب یا اڈے پر یہ پہلا حملہ ہے۔