.

اسرائیل:کووِڈ-19 کی پابندیوں میں نرمی؛بیشترکاروباری اور تعلیمی ادارے دوبارہ کھل گئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیل نے کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے گذشتہ سال ستمبر میں عایدکردہ بیشتر پابندیوں میں نرمی کردی ہے اور اس کے بیشتر معاشی ،کاروباری اور تعلیمی ادارے دوبارہ کھول دیے گئے ہیں۔

اسرائیلی حکومت نےاتوار سے ریستورانوں ، بار ، تقریباتی مراکز ،کھیلوں کے مراکز ، ہوٹلوں اور تمام پرائمری اور سیکنڈری تعلیمی اداروں کو دوبارہ کھول دیا ہے۔البتہ وہاں داخل ہونے پر بعض قدغنیں عاید کی ہیں اور تعداد کو بھی کل گنجائش کے مقابلے میں محدود رکھنے کی ہدایت کی ہے۔

اسرائیلی حکومت نے ہفتے کی شب بعض پابندیوں میں نرمی کردی ہے اور مرکزی بین الاقوامی ہوائی اڈے کو دوبارہ کھول دیا ہے۔اب بیرون ملک سے محدود تعداد میں مسافروں کو ملک میں آنے کی اجازت ہوگی۔

صہیونی حکومت کے اعلامیے کے مطابق ریستورانوں میں ویکسین لگوانے والے لوگوں کے لیے کھانے کی سہولت دستیاب ہوگی۔

اسرائیل نے لوگوں کو کرونا وائرس سے بچانے کے لیے ویکسین لگانے کی مہم تیز کررکھی ہے اور ملک کی 52 فی صد آبادی کو ویکسین کا ایک انجیکشن لگایا جاچکا ہے اور قریباً 40 فی صد کو فائزر کی ویکسین کی دونوں خوراکیں لگائی جاچکی ہیں۔

اسرائیل نے کرونا وائرس کی وبا پھیلنے کے بعد سے اب تک 799000 کیسوں کی تصدیق کی ہے۔ان میں سے 5856 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔