آرمینی آرتھوڈوکس پادری کی رواداری کے کلچر کے فروغ کے لیے سعودی کاوشوں کی تحسین

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

لبنان میں آرمینیائی آرتھوڈوکس کے سرپرست ارم اول کیشیشین نے رواداری اور اعتدال پسندی کی ثقافت کو عام کرنے میں سعودی عرب کے کردار کو سراہا ہے۔

یہ بات انٹیلیاس میں آرتھوڈوکس چرچ کے صدر دفتر میں خادم الحرمین الشریفین کے لبنان میں سفیر ولید عبداللہ بخاری کے چرچ کے دورے اور آرتھوڈوکس چرچ کے سرپرست سے ملاقات کے موقع پر کی گئی۔ سعودی عرب میں لبنان کے سفیر ولی عبداللہ بخاری نے آرتھوڈوکس چرچ رہ نما سے بات چیت میں بین المذاہب ہم آہنگی کے فروغ سمیت دیگر اہم امور پر بات چیت کی۔ اس موقعے پر پادری ارم اول کیشیشین نے سعودی عرب کی طرف سے عالمی سطح پر رواداری کی ثقافت کو عالم کرنے، تہذیبوں کے درمیان تصادم کو روکنے اور بین المذاہب ہم آہنگی کو فروغ دینے کے ساتھ مشترکہ اقدار پر ایک دوسرے کے ساتھ تعاون کے اصول کو سراہا۔

اس موقعے پر سعودی عرب کے سفیر ولید بخاری نے لبنان کے داخلی سیاسی استحکام کی حمایت کے عزم کا اعادہ کیا اور کہا کہ لبنان کی تمام قوتوں کو سیاسی نفرت کے بیانیے سے بالا تر ہو کر امن اور بقائے باہمی کے اصول پر عمل کرنا چاہیے۔

ولید بخاری نے اپنے میزبان پیٹرچ ارک ارم اول کیشیشین کے ساتھ ملاقات میں دونوں قوموں کے در میان کو مزید مستحکم اور مضبوط بنانے کی ضرورت پر زور دیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں