.

عرب لیگ کی لبنانی سیاست دان کو بحران کے خاتمے کے لیے مدد کی پیش کش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عرب لیگ نے لبنانی سیاست دانوں پر زوردیا ہے کہ وہ ملک میں جاری سیاسی تعطل کو دور کرنے کے لیے فوری اقدامات کریں۔تنظیم نے لبنان میں جاری بحران کے خاتمے کے لیے مدد کی پیش کش کی ہے۔

لبنان میں جاری مالیاتی ، سیاسی اور سماجی بحران نے سوموار کو مزید شدت پکڑی ہے جب نامزد وزیراعظم سعد الحریری اور صدرمیشال عون نئی حکومت کی تشکیل کے معاملے پراتفاق رائے میں ایک مرتبہ پھر ناکام رہے ہیں۔اس طرح گذشتہ پانچ ماہ سے جاری بحران کے فوری خاتمے کی امیدیں دم توڑ گئی ہیں۔

عرب لیگ نے منگل کے روز ایک بیان میں کہا ہے کہ ’’سیکریٹری جنرل احمدابوالغیظ نے لبنان میں جاری سیاسی مباحثے پرگہری تشویش کااظہار کیا ہے کیونکہ ملک تیزی سے بدترین بحران کی جانب بڑھ رہا ہے اور اس کے خدوخال اب بالکل واضح ہوچکے ہیں۔‘‘

تنظیم نے خبردارکیا ہے کہ سیاسی تعطل سے لبنانی عوام کے مصائب میں مزید اضافہ ہوگا۔اس نے لبنان میں جاری سیاسی محاذ آرائی کے خاتمے کے لیے ہرممکن مدد کی پیش کش بھی کی ہے۔