.

اسرائیل : انتخابات کے نتائج میں نیتن یاہو کی جماعت سرفہرست

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیل میں عام انتخابات کے نتائج میں وزیر اعظم بنیامین نیتن یاہو کی لیکوڈ پارٹی سرفہرست ہے۔ یہ بات پولنگ مراکز سے باہر آنے والے رائے ووٹروں کے حوالے سے ہونے والے سروے کی رپورٹوں میں بتائی گئی۔ کہا جا رہا ہے کہ آئندہ حکومت کی تشکیل کے حوالے سے نیتن یاہو کا سب سے زیادہ امکان ہے۔ واضح رہے کہ دو سال کے اندر اسرائیل میں یہ چوتھے عام انتخابات ہیں۔

سروے رپورٹوں کے مطابق اسرائیلی پارلیمنٹ کی 12 نشستوں میں لیکوڈ پارٹی کو 31 سے 33 نشستیں ملی ہیں۔ اس کے بعد دوسرے نمبر پر یائر لیبڈ کی جماعت "یش عتید" ہے جس کو 16 سے 18 نشستیں مل جائیں گی۔

اسی طرح سروے رپورٹ میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ مشترکہ عرب اتحاد کو 8 سے 9 نشستیں حاصل ہوں گی۔ یہودیوں کی سخت گیر مذہبی جماعت "شاس" کو بھی اتنی ہی نشستیں ملنے کا امکان ہے۔

علاوہ ازیں میرات میخائیلی کی ورک پارٹی اور وزیر دفاع بینی گینٹز کی بلیو وائٹ پارٹی کو 7 سے 8 نشستیں ملیں گی۔ یہ معاملہ نفتالی بینیٹ کی پارٹی "يمينا" کا ہے۔

انتخابات کے غیر حتمی سرکاری نتائج کا اعلان آج رات کیا جائے گا۔ انتخابی کمیشن کے اعلان کے مطابق وہ حتمی نتائج کا اعلان جمعے کے روز کرے گا۔