.

حوثی ملیشیا کا سعودی عرب پر ڈورن حملہ ناکام، بمبار ڈرون تباہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی آئینی حکومت کے دفاع کے لیے سرگرم عرب اتحاد نے ایرانی حمایت یافتہ حوثی ملیشیا کی جانب سے سعودی عرب کے سرحدی شہر خمیس مشیط پر حملے کے لیےفضا میں چھوڑا بمبار ڈرون تباہ کردیا۔

عرب اتحاد کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ حوثی ملیشیا تواتر کے ساتھ شہری تنصیبات اور شہری آبادی کو اپنی دہشت گردانہ کارروائیوں کا نشانہ بنا رہی ہے جب کہ عرب اتحاد حوثی دہشت گردوں کی مجرمانہ کارروائیوں کی روک تھام کرتے ہوئے شہریوں کے جان ومال کی حفاظت کررہا ہے۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ حوثی ملیشیا کی طرف سے مسلسل حملے اس بات کی دلیل ہیں کہ حوثی باغی خطے کے امن واستحکام کو تاراج کررہےہیں۔

خیال رہے کہ گذشتہ روز عرب عسکری اتحاد نے حوثی باغیوں کی طرف سے سعودی عرب پر حملوں کے لیے تیار دو بمبار ڈرون طیارے اور دو بم بار کشتیاں تباہ کردی تھیں۔

یمن میں آئینی حکومت کے دفاع کے لیے لڑنے والے عرب اتحاد کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ حوثی باغی اسٹاک ہوم معاہدے کو الحدیدہ گورنری میں حملوں، عالمی اور علاقائی جہاز رانی کو خطرے میں ڈالنے کے لیے استعمال کررہے ہیں۔