.

دبئی: تیرنے والے گھروں کی خرید و فروخت کے لیے قانون تیار !

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

دبئی میں حکومت ایک نئے قانون کی منظوری دینے کا ارادہ رکھتی ہے۔ یہ قانون تیرتے ہوئے رہائشی یونٹوں کے لیے مخصوص ہے۔ اس کا مقصد مذکورہ نوعیت کے یونٹوں کی خرید و فروخت، کرائے پر دینے اور وراثت کے عمل کو باقاعدہ بنانا ہے۔

دبئی کی کورٹس میں پراپرٹی کورٹ کے سربراہ جسٹس سالم القائدی کا کہنا ہے کہ تیرنے والے گھروں سے متعلق قانونی بل کی تجویز اعلی انتظامیہ کو پہنچا دی گئی ہے جو کہ اس وقت زیر غور ہے۔ یہ قانون کشتیوں میں بنے یا پھر دیگر تیرتے گھروں سے متعلق ہے جو سمندر میں چلائے جانے کے بغیر رہائش کے لیے تیار کیے گئے ہوں۔

القائدی کے مطابق کرونا کی وبا کے دوران عدالتوں میں مقدمات کے فیصلوں کے تناسب میں اضافہ ہوا اور مقدمات کے فیصلوں میں تیزی بھی آئی۔ گذشتہ برس عدالتوں میں پراپرٹی سے متعلق 1662 مقدمات دائر کیے گئے جن میں سے 1535 کا فیصلہ ہو چکا ہے۔