.

سعودی عرب میں تحفّظِ آب کے قومی مرکز نے کام شروع کر دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں National Centre for Water Efficiency and Conservation نے آج پیر کے روز سے کام شروع کر دیا ہے۔ اس مرکز کا مقصد سرکاری اداروں کو پابند بنانا ہے کہ وہ اپنی ملحقہ تنصیبات میں پانی کے استعمال سے آگاہ کریں۔ مزید یہ کہ پانی کی ترسیل کی اہلیت کو بہتر بنایا جائے۔ ویژن 2030ء پروگرام کی روشنی میں شہری، زرعی اور صنعتی مقاصد میں پانی کا مثالی صورت میں استعمال یقینی بنایا جائے۔

اس سلسلے میں سینٹر کے چیف ایگزیکٹو انجینئر فہاد الدوسری نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ "رواں سال فروری میں اس مرکز کا قیام ایک اہم قدم ہے۔ اس کا مقصد مملکت میں پانی کی پیداوار، اس کی منتقلی اور تقسیم کی اہلیت کو بڑھانا اور استعمال کے حوالے سے رہ نمائی فراہم کرنا ہے۔ مزید یہ کہ اس میدان میں سرکاری اور غیر سرکاری اداروں کی کوششوں کو یکجا کیا جائے۔ اس سلسلے میں یہ مرکز قومی پروگراموں اور مؤثر منصوبوں پر عمل درامد کرے گا۔ اس مقصد کے لیے ایک جامع لائحہ عمل مرتب کیا جائے گا۔ اس میں پانی کے حوالے سے رہ نمائی اور اس کے متعلق اشاریوں، اہداف، منصوبوں اور پالیسیوں کا تعین اور رپورٹوں کی تیاری شامل ہے"۔