.

سعودی عرب کی اربیل ہوائی اڈے پر ڈرون حملے کی شدید مذمت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی وزارت خارجہ نے جمعرات کے روز عراق کے صوبہ کردستان کے دارالحکومت اربیل میں قائم بین الاقوامی ہوائی اڈے پر ہونے والے ایک ڈرون حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئےاس حملے کو عراق اور علاقائی خود مختاری و سلامتی کو تباہ کرنے کی کوشش قرار دیا ہے۔

سعودی عرب کی وزارت خارجہ کی طرف سے جمعرات کے روز جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ الریاض عراق کے شہر اربیل کے ہوائی اڈے پر ڈرون حملے کی شدید مذمت کرتا ہے۔ سعودی عرب عراق کی سلامتی کو نقصان پہنچانے اور تخریب کاری پر مبنی واقعات کی مذمت کر چکا ہے۔

اربیل ہوائی اڈے پر ہونے والا حملہ خطے کے استحکام اور سلامتی پر حملہ ہے۔ اس طرح کے حملوں کے نتیجے میں فضائی نقل وحمل کو متاثر کرنا اور دہشت گردی کے خلاف جنگ میں عراق کی کوششوں کو نقصان پہنچانا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ دہشت گردانہ حملوں پر سعودی عرب عراق کے ساتھ ہے۔ ہم دہشت گردی اور انتہا پسندی کی تمام اشکال کی مذمت کرتے ہوئے انہیں مسترد کرتے ہیں۔

خیال رہے کہ جمعرات کےروز عراق کے صوبہ کردستان کی ڈیموکریٹک پارٹی کےایک رہ نما ہوشیار زیباری نے بتایا تھا کہ بدھ کے روز بمبار ڈرون طیارے سے اربیل ہوائی اڈے پر حملہ کیا گیا ہے تاہم اس حملے میں کسی قسم کا جانی نقصان نہیں ہوا ہے۔