.

فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے میں فائرنگ سے تین یہودی آباد کار زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے کے شمالی شہر نابلس میں فائرنگ سے کم سے کم تین یہودی آباد کار زخمی ہو گئے۔ یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب اسرائیلی فوج کی ایک چوکی پر فائرنگ کی گئی۔

العربیہ چینل کے نامہ نگار نے بتایا کہ طبی ذرائع زخمیوں میں سے دو کی حالت کو تشویشناک قرار دیا دے رہے ہیں، جبکہ تیسرے کے معمولی زخمی ہونے کی تصدیق کی گئی ہے۔

اسرائیلی حکام کا کہنا ہے کہ حملہ ایک کار سے کیا گیا جو کارروائی کے بعد وہاں سے بہ حفاظت بچ نکلنے میں کامیاب ہو گئی۔ واقعے کے بعد اسرائیلی فوج نے علاقے کو گھیرے میں لے کر وسیع پیمانے پر سرچ آپریشن شروع کردیا۔

عینی شاہدین نے بتایا کہ فائرنگ اس کار سے کی گئی جو چوکی سے گزر رہی تھی۔ اسرائیلی قابض فوج نے ایک بیان میں کہا ہے کہ اسے مغربی کنارے میں فائرنگ کے حملے کی اطلاع ملی ہے۔

بعدازاں اسرائیلی آرمی ریڈیو نے اطلاع دی کہ ایک زخمی کی حالت خاصی تشویشناک ہے۔

اسرائیلی وزیر اعظم بینامین نیتن یاہو نے کہا کہ وہ تابواح چو پر ہونے والی دہشت گردی کی فائرنگ سے زخمیوں کی جلد صحت یابی کے خواہاں ہیں اور زخمیوں‌کو بہترین طبی سہولیات فراہم کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ امید ہے کہ حملہ آور جلد گرفتار کرلیے جائیں گے۔