.

دھماکا خیز ڈرون طیاروں اور بیلسٹک میزائلوں کے ذریعے نجران پر حملے کی حوثی کوشش ناکام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے فضائی دفاعی نظام نے اتوار کی شب حوثیوں کی جانب سے نجران کی سمت بھیجے جانے والے دو دھماکا خیز ڈرون طیاروں کو تباہ کر دیا۔ علاوہ ازیں اسی سمت داغے جانے والے دو بیلسٹک میزائلوں کو بھی راستے میں ہی روک دیا گیا۔

یمن میں آئینی حکومت کی حمایت کرنے والے عرب اتحاد نے مذکورہ ڈرون طیاروں اور بیسلٹک میزائلوں کی تباہی کی تصدیق کی۔

عرب اتحاد کے مطابق خطرے کے ذرائع سے نمٹنے کے لیے عملی اقدامات کی جا رہے ہیں تا کہ شہریوں اور شہری تنصیبات کا تحفظ یقینی بنایا جا سکے۔

اس سے قبل عرب اتحاد نے ہفتے کی شب اعلان کیا تھا کہ حوثیوں کی جانب سے خمیش مشیط کی سمت بھیجا جانے والا ایک دھماکا خیز ڈرون طیارہ تباہ کر دیا گیا۔

اتحاد نے زور دیا کہ حوثی ملیشیا کی جانب سے شہریوں کو نشانہ بنانے کی کوشش بین الاقوامی قانون کی سنگین خلاف ورزی شمار ہوتی ہے۔

یاد رہے کہ ایران نواز حوثی ملیشیا نے حالیہ عرصے میں سعودی عرب میں شہری اور اقتصادی تنصیبات کو نشانہ بنانے کی کوششیں تیز کر دی ہیں۔ ان کوششوں پر کئی عرب اور مغربی ممالکت کی جانب سے مذمت سامنے آئی ہے۔ ان ممالک نے زور دے کر کہا ہے کہ وہ دہشت گرد حوثیوں کے ان حملوں کے خلاف سعودی عرب اور اس کے امن کے ساتھ کھڑے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں