.

سعودی عرب:9 بین الاقوامی ہوائی اڈوں سے 385 پروازوں کی تیاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی سول ایوی ایشن اتھارٹی نے کہا ہےکہ بین الاقوامی سفرکے لیے ہوائی اڈوں پرتمام انتظامات مکمل کرلیے گئے ہیں۔ بین الاقوامی سفر کی بحالی کے چند گھںٹوں کے دوران مملکت کے 9 ہوائی اڈوں سے 385 بین الاقوامی پروازیں مسافروں کو لے کراپنی اپنی منزل مقصود کی طرف روانہ ہوں گی۔

سول ایوی ایشن کے مطابق سب سے زیادہ بین الاقوامی فلائٹس الریاض کے شاہ خالد بین الاقوامی ہوائی اڈے سے روانہ ہوں‌گی جہاں سے 225 ہوائی جہاز سیکڑوں مسافروں کو لے کر روانہ ہوں‌گے۔ اس کے بعد جدہ کے شاہ عبدالعزیزانٹرنیشنل ایئرپورٹ سے 75 اور دمام کے شاہ فہد ہوائی اڈے سے 66 پروازیں چلیں گی۔

سول ایوی ایشن کے ترجمان نے بتایا ہے کہ 'کرونا' وبا کے پیش نظر بین الاقوامی سفر کے موقعے پر سخت احتیاطی تدابیر اختیار کی گئی ہیں۔ ہوائی جہازوں میں کچھ نشستیں دوران پرواز ہنگامی صورت حال سے نمٹنے کے لیے مختص ہیں۔

خیال رہے کہ سعودی عرب نے آج 17 مئی 2021ء سے بین الاقوامی سفر کی مرحلہ وارواپسی کا اعلان کیا ہے۔ سعودی عرب نے آج سے بری، بحری اور فضائی روٹس آمد ورفت کے لیے کھول دیے ہیں۔

سعودی عرب کی وزارت داخلہ نے بین الاقوامی سفر کے لیے 'ایس اوپیز' جاری کیے ہیں جن میں 'کوویڈ 19' کی دونوں پہلی خوراکیں لینے والے افراد کو سفر کو اجازت ہوگی۔ اس کے علاوہ ایسے افراد جنہوں‌نے 14 دن قبل کرونا کی پہلی ویکسین لگوائی ہوگی۔

ایسے افراد جو کرونا وبا کا کم سے کم چھ ماہ قبل شکار ہوئے ہوں بین الاقوامی سفر کرسکتے ہیں۔سعودی عرب کی سرکاری نیوز ایجنسی 'ایس پی اے' کے مطابق پاسپورٹس ڈاریکٹوریٹ نے ایک بیان میں بین الاقوامی سفر کے موقعے پرمسافروں کے لیے شرائط کا اعلان کیا ہے۔

ان شرائط میں مسافروں کے لیے کوویڈ 19 کی پہلی دو خوراکیں لینے کی شرط لازمی قرار دی گئی ہے، تاہم اگر جس شخص نے سفر سے 14 دن قبل کرونا کی خوراک لی ہو اسے بھی سفر کی اجازت دی جا سکتی ہے۔

کرونا وبا کا شکار ہونے کےبعد صحت ہونے والے ایسے افراد جو چھ ماہ قبل وبا کا شکار ہوئے ہوں سفر کرسکتے ہیں۔ 18 سال سے کم عمر کے افراد کو سعودی عرب کے مرکزی بنک'ساما' کی طرف سے جاری کردہ انشورینس ثبوت پیش کرنا ہو گا۔