.

مصر : یوکرائن کی انٹیلی جنس کے سابق سربراہ کی موت کی تفصیلات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر میں ڈپٹی پراسیکیوٹر نے کل ہفتے کے روز ایک بیان میں یوکرائن کی انٹیلی جنس کے 62 سالہ سابق سربراہ کی سیناء کے صوبے میں پانی میں ڈوب کر ہلاک ہونے کی تفصیلات کا انکشاف کیا۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ استغاثہ کو جمعے کے روز سیناء کے جنوب میں دہب سینٹرل ہسپتال سے اطلاع موصول ہوئی کہ اسے یوکرائن سے تعلق رکھنے والے ایک شخص کی لاش پہنچی ہے۔ اس شخص کی موت پانی میں ڈوبنے سے واقع ہوئی۔

تفصیلات کے مطابق مرنے والے شخص نے اپنے ایک دوست کے ساتھ چالیس میٹر کی گہرائی تک غوطہ لگایا۔ اسی دوران میں اچانک متوفی شخص ڈوبنے لگا۔ دوست نے اسے بچانے کی ہر ممکن کوشش کی مگر کامیاب نہ ہو سکا۔ غرق ہونے والے شخص کو پانی کے اوپر لایا گیا تو اس کی آخری سانسیں چل رہی تھیں۔ بعد ازاں اسے ہسپتال پہنچایا گیا مگر وہ جانبر نہ ہو سکا۔

یوکرائن کی انٹیلی جنس کے سابق سربراہ وکٹر ہیفوذڈ 24 مئی 1959ء کو پیدا ہوئے تھے۔ وہ ایک عرصے سے مصر کے صوبے سیناء کے جنوب میں واقع علاقے دہب میں مقیم تھے۔