.

سعودی عرب میں پہلے دو ڈیجیٹل بینکوں کے لیے پرمٹ جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی کابینہ نے وزیر مالیات کی جانب سے STC بینک (زیر تاسیس) اور سعودی ڈیجیٹل بینک (زیر تاسیس) کو مطلوبہ پرمٹ جاری کیے جانے کی منظوری دے دی ہے۔ یہ فیصلہ منگل کی شام خادم حرمین شریفین کے زیر صدارت منعقد ہونے والے کابینہ کے اجلاس میں کیا گیا۔

سعودی وزیر مالیات محمد الجدعان کے مطابق کابینہ کی جانب سے مذکورہ منظوری مالیاتی سیکٹر کی ترقی کے پروگرام کے اہداف کے ضمن میں ہے۔ یہ ویژن 2030ء کی روشنی میں اقتصادی اصلاحات کے ایک ضخیم منصوبے کا حصہ ہے۔

اپنی ٹویٹ میں الجدعان نے لکھا کہ ان اہداف کے ذریعے ڈیجیٹل انفرا اسٹرکچر کو ترقی دے کر زیادہ فعّال بنانے کی کوششیں کی جا رہی ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ دو ڈیجیٹل بینکوں کو پرمٹ کے اجرا کی منظوری مالیاتی سیکٹر کے نظام کی ترقی اور قومی معیشت کی سپورٹ اور ترقی کے سلسلے میں دی گئی ہے۔ اس طرح نئی کمپنیاں مالی خدمات پیش کر سکیں گی۔

انٹرنیشنل ٹیلی کمیونی کیشن یونین نے پیر کے روز بتایا تھا کہ دنیا بھر میں ٹیلی کمیونی کیشن ریگولیٹرز کے حوالے سے digital regulatory maturity index میں سعودی عرب نے پانچویں درجے میں جگہ بنا لی ہے۔ سعودی عرب کی مشرق وسطی اور افریقا ریجن میں پہلی اور جی ٹوئنٹی گروپ کے ممالک میں نویں پوزیشن ہے۔

مملکت نے ڈیجیٹل اکنامی میں سرمایہ کاری کو مضبوط بنانے، ڈیجیٹل ٹرانسفارمیشن میں تیزی لانے اور انتظامی اداروں کے بیچ نظم و نسق کی اعلی ترین سطح کو یقینی بنانے کے لیے انقلابی اقدامات کیے ہیں۔

روئٹرز نیوز ایجنسی نے منگل کے روز با خبر ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ سعودی پبلک انویسٹمنٹ فنڈ(PIF) ،،، سعودی ٹیلی کمیونی کیشن کمپنی (STC) میں اپنا کچھ حصہ فروخت کرنے پر غور کر رہا ہے۔

سعودی پبلک انویسٹمنٹ فنڈ کے اثاثوں کی مجموعی مالیت 430 ارب ڈالر کے قریب ہے۔