.

سعوی عرب فلمی میلے کا ساتواں سیشن جمعرات سے دمام میں شروع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

کل جمعرات سعودی فلم فیسٹیول کا ساتواں سیشن سوسائٹی فار کلچر اینڈ آرٹس کے زیر اہتمام دمام میں کنگ عبد العزیز سنٹر برائے ورلڈ کلچر "اثرا" کے اشتراک سے شروع ہو گیا ہے۔ فلمی میلے کو وزارت ثقافت اور اتھارٹی کا تعاون بھی حاصل ہے۔ فلمی میلے میں متعدد مقامی ، خلیجی اور بین الاقوامی فلم ساز اور ستارے شرکت کریں گے۔

سات روزہ فیسٹیول میں سعودی سنیما کی شاہکار فلمیں پیش کی جائیں گی۔ میلے کے دوران سعودی عرب کی 36 فلموں کے درمیان ایوارڈز کے حصول کے لیے مقابلہ ہوگا۔ ان فلموں میں گولڈن ایوارڈ کے لیے نامزد مختصر اور طویل نوعیت کی 21 خلیجی فلموں کے درمیان مقابلہ ہوگا۔ فلم فیسٹیول کے موقعے پر فلم سازی کی چارتربیتی ورکشاپس اور تین ثقافتی سیمینارز کا بھی انعقاد کیا جائے گا۔

تہوار کے مقاصد

اس میلے کا مقصد فلم بینوں کے مابین مسابقت اور فلم انڈسٹری میں تخلیقی صلاحیتوں کو فروغ دینا ، گولڈن پام ایوارڈز حاصل کرنا ، اور جیوری کو اعزاز دینے کے علاوہ بہترین ، مختصر ، دستاویزی فلموں کی تیاری ، اداکار ، اداکارہ ، موسیقار اور سنیما نگار کے مالی اعزازات بھی حاصل کرنا ہے۔ سعودی فلم کے مصنف ، نقاد ، ہدایتکار اور پروڈیوسر کو اعزاز سے نوازا جائے گا۔ اس کے علاوہ برٹش فلم انسٹی ٹیوٹ "بی ایف آئی" میں سابق ہیڈ پروڈکشن مامون حسن ، اور بحرین کے ڈائریکٹر فلم انڈسٹری کے پروڈیوسر اورسرخیل ڈاکٹر بسام الذوادی کے فنی اور فلمی خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے ان کی خصوصی تکریم کی جائے گی۔