.

سعودی عرب: صنعتی شہروں میں پہلا کنٹینر یارڈ قائم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

کل منگل کو سعودی عرب کی صنعتی شہروں کی اور ٹیکنالوجی زون اتھارٹی ’’مدن" نے جدہ میں واقع تیسرے صنعتی شہر میں پہلے کنٹینر یارڈ کے قیام کا اعلان کیا ہے۔ اس یارڈ کے لیے 10،809 ہے مربع میٹر جگہ مختص کی گئی ہے.

مارکیٹنگ اینڈ کارپوریٹ مواصلات کے ڈائریکٹر سرکاری ترجمان قصیی العبدالکریم نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو اس بات کی تصدیق کی ہے کہ کمپنی کے ساتھ 5000 کنٹینروں کی گنجائش والا ایک یارڈ قائم کرنے پر اتفاق کیا گیا ہے جس میں خشک اور فریجریٹریٹ کنٹینر اسٹوریج سروسز ، کسٹم کلیئرنس ، سامان کی نقل و حمل ، پیکنگ اور ان لوڈنگ کے علاوہ۔ فیکٹریوں اور گوداموں میں اور اس سے سامان کی منتقلی کا عمل کیا جاسکے گا۔

انہوں نے یہ بھی مزید کہا کہ اس منصوبے سے صنعتی شہروں میں واقع ’مدن‘ کے شراکت داروں کے لیے درآمدات اور برآمدات کے کاروبار میں مدد ملے گی۔ یہ منصوبہ قومی برآمدات کی شرح کو بڑھانے میں معاون ثابت ہوگا۔ لاجسٹک سروسزکے تحت اس اہم شعبے میں سرمایہ کاری میں اضافے میں مدد ملے گی۔

اس منصوبے سے صنعت کو بااختیار بنانے اور مقامی مواد کو بڑھانے میں مختلف کمپنیوں کےمالکان کو سامان کی آمد ورترسیل میں سہولت ہوگی۔’مدن‘ کی حکمت عملی کے دائرہ کار کے میں قومی صنعتی ترقی اور لاجسٹک پروگرام "این اے ڈی ایل پی" جیسے اقدامات اس کا حصہ ہیں۔

یہ قابل ذکر ہے کہ مدن نے اس سے قبل پبلک اتھارٹی برائے ٹرانسپورٹ کے تعاون کے ایک میمورنڈم پر دستخط کیے تھے ، تاکہ صنعتی شہروں میں سامان کی نقل و حمل کی سرگرمیوں کو منظم کرنے ، ترسیل اور کوالیٹیجک سرمایہ کاری کو راغب کرنے میں کامیابی حاصل کی جاسکے۔

اس نے صنعتی شہر عرعر میں 30،000 مربع میٹر کے رقبے کو ایک کمپنی کے ساتھ مختص کرنے کے معاہدے پر بھی دستخط کیے جس کا مقصد لاجسٹک زون قائم کرنا،کولڈ اسٹوریج اور خشک گوداموں کا قیام عمل میں لانا ہے۔