.

لبنان سے راکٹ حملے کے بعد اسرائیل میں سائرن بج اٹھے!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیل کے شمالی علاقے میں لبنان کی جانب سے تین راکٹ آنے کے بعد سائرن بج اٹھے ہیں۔

العربیہ کے نمایندے نے اطلاع دی ہے کہ بدھ کو دوراکٹ اسرائیل کے شہر کیریات شمونا میں گرے ہیں اور ایک راکٹ لبنان کی حدود ہی میں گرا ہے۔

اسرائیلی فوج نے ایک بیان میں کہا ہے کہ لبنان کے ساتھ واقع سرحدی علاقے میں تین آبادیوں میں انتباہی سائرن بجائے گئے ہیں مگرفوج نےعلاقے میں شہریوں پر کوئی پابندی عاید نہیں کی گئی ہے۔

اسرائیلی چینل 12 نے اطلاع دی ہے کہ آئرن ڈوم دفاعی نظام نے ایک راکٹ کو روک کو ناکارہ بنادیا تھا اور ایک فضا ہی میں پھٹ گیا تھا۔اسرائیلی فوج نے اس راکٹ حملے کے جواب میں لبنانی علاقے کی جانب توپ خانے سے گولہ باری کی ہے۔

اسرائیل کے شمال میں واقع وادیِ جلیل میں شہری سکیورٹی کے سربراہ اساف لینگلبین نے مقامی میڈیا کو بتایا ہے کہ علاقے میں سیاحتی موسم کے عروج کے دنوں میں یہ راکٹ حملہ کیا گیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ ’’یہ حملہ ہمارے لیے حیران کن تھا لیکن یہ کوئی ایسا انہونا واقعہ نہیں جس کے رونما ہونے کی توقع نہیں کی جاسکتی تھی۔‘‘

اسرائیلی وزیراعظم نفتالی بینیٹ اور وزیردفاع بینی گینز کو اس پیش رفت کے بارے میں آگاہ کردیا گیا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ وہ اسرائیلی ردعمل کی نگرانی کررہے ہیں۔

العربیہ کے نامہ نگار نے مزید بتایا ہے کہ اسرائیلی شہر میں راکٹ گرنے کے بعد آگ دیکھی گئی ہے اور حکام جائے وقوعہ پر پہنچ گئے تھے۔فوری طورپر راکٹ حملے اور اسرائیلی فوج کی گولہ باری سے کسی جانی اورمالی نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔