.

شام : بیٹی کو کئی برس زیر زمین محبوس رکھنے والا باپ گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام میں دارالحکومت دمشق کے نواحی دیہی علاقے میں پولیس کو ایک شہری کے بارے میں اطلاع دی گئی جس نے اپنی بیٹی کو ایک الگ تھلگ کمرے میں تنہا محبوس رکھا ہوا تھا۔ کمرے کا آدھا حصہ زیر زمین ہے۔

وزارت داخلہ کے مطابق جدیدہ عرطوز قصبے میں سکونت پذیر شہری کا نام عدنان اور اس کی بیٹی کا نام نورہ ہے۔ پولیس نے مذکورہ جگہ پر چھاپا مار کر وہاں محبوس لڑکی کو آزاد کرا لیا۔ لڑکی عمر کی تیسری دہائی میں ہے اور اس پر نفسیاتی اور جسمانی تھکاوٹ کے واضح آثار نظر آ رہے تھے۔ لڑکی کو فوری طور پر قریب ترین طبی مرکز منتقل کیا گیا تا کہ مطلوبہ علاج اور دیکھ بھال فراہم کی جا سکے۔ لڑکی کے باپ کو حراست میں لے لیا گیا۔

تحقیقات پر باپ نے اعتراف کیا کہ اس نے بیٹی کو کئی برس سے محبوس کر رکھا تھا۔ باپ کا موقف ہے کہ اس کی بیٹی مریض ہے۔