.

سعودی بچے نے روایتی عرب میزبانی کی یاد تازہ کردی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بہت سے عرب معاشرے اپنی سخاوت اور مہمان نوازی کے لیے مشہور ہیں۔

تاہم ایک بچے کی طرف سے اس طرح کے رویے کا ہونا اور اس کی عمر محض 10 سال سے زیادہ نہ ہو بلاشبہ حیران کن ہے۔

اس بچے کی ویڈیو ایک صحرائی علاقے میں بنائی گئی جہاں اس کی ملاقات ایک مقامی ٹی وی چینل کے رپورٹر سے ہوئی۔ یہ رپورٹر صحرائی زندگی اور اونٹو کی کوریج کے لیے اس علاقے میں آیا تھا۔

یہ ویڈیو کلپ سعودی میڈیا پر کافی مقبول ہوا۔ اس میں بچے کو ٹی وی نامہ نگار کو رات کے کھانے کے لیےاصرار کے ساتھ دعوت دیتے دیکھا جا سکتا ہے۔ بچہ کہت ہے کہ آپ ہمارے مہمان ہیں۔ رات کا کھانا ہمارے ساتھ کھائیں یا کم سے کم کافی یا چائے ہمارے ساتھ نوش کریں۔

جب صحافی نے معذرت کی تو بھورے رنگ کے بچے نے اصرار کرتے ہوئے کہا کہ ’میں قسم کھا کر کہتا ہوں کہ آپ تشریف رکھیں‘۔ اس بچے نے عرب صحرا نشینی اور دیہاتی زندگی کی سخاوت کا بہترین مظاہرہ کیا۔ اس طرح کے الفاظ کسی کی تکریم اور اس کی میزبانی کے لیے استعمال کیے جاتے ہیں۔

یہ ویڈیو آج کل کی نہیں دکھائی دیتی کیونکہ اس میں دیکھا جانے والا بچہ گرم کپڑوں میں ملبوس ہے۔ عین ممکن ہے یہ ویڈیو سردیوں میں بنائی گئی ہو۔