.

سعودی ڈیجیٹل اتھارٹی کا جعلی ایپس سے محتاط رہنے کا انتباہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ڈیجیٹل گورنمنٹ اتھارٹی سعودی عرب کے گورنر انجینئر احمد الصویان نے جعلی ایپلی کیشنزسے متعلق آگاہی بڑھانے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ایسی جعلی ایپلی کیشنز صارفین کی پرائیویسی کو متاثر کرنے کے ساتھ ان کے نقصان کا باعث بھی بنتی ہیں۔ غیر معیاری فیک ایپلی کیشنز صارفین کی باعتماد حکومتی ڈیجیٹل سروسز تک رسائی کی راہ میں بھی رکاوٹ بنتی ہے۔

ڈیجیٹل اتھارٹی نے اس امر کی ضرورت پر بھی زور دیا کہ کسی بھی ایپلی کیشن کو اپنے سمارٹ فون میں ڈاؤن لوڈ کرنے سے پہلے اس کے اصل اور معیاری ہونے کا یقین کر لیں۔ اتھارٹی نے اس مقصد کے لیے my.gov.sa قومی پورٹل لانچ کیا ہے جہاں قابل اعتماد سرکاری ایپلی کیشنز کی مکمل فہرست موجود ہے۔

اتھارٹی نے ایپلی کیشنز استعمال کرنے والوں سے کہا ہے کہ وہ محفوظ اور معیاری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے ہمیشہ اس مقصد کے لیے بنائی گئی حکومتی ایجنسی سے رجوع کریں۔ دوسری صورت میں صارفین اپیلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے سے پہلے اسے ڈیویلپ کرنے والے ادارے کے لٹریچر کا مطالعہ کریں اور اگر انہیں اپیلی کیشن میں کوئی جھول نظر آئے تو اس کی اطلاع فورا مجاز اتھارٹی کو دیں۔

ڈیجیٹل گورنمنٹ اتھارٹی، ڈیجیٹل حکومت سے متعلق تمام معاملات کے حوالے سے ایک مستند فورم ہے۔ صارفین تک اعلی پائے کی باعتماد ڈیجیٹل سروسز کی فراہمی ڈیجیٹل گورنمنٹ کا بنیادی نصب العین ہے جس پر عمل کرتے ہوئے وہ صارفین اور حکومتی ایجنسیوں کے درمیان شراکت کے مواقع بھی یقینی بناتی ہے۔