.

سعودی عرب میں ’نیٹ بال‘ کی پہلی ویمن ٹیم کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

نیٹ بال سعودی عرب نے مملکت میں پہلا ویمن نیٹ بال ٹورنامنٹ منعقد کیا ہے۔ نیٹ بال دراصل باسکٹ بال جیسا اجتماعی کھیل ہے جس میں ایک ہی وقت میں کئی کھلاڑی حصہ لے سکتے ہیں۔ سعودی عرب میں خواتین نیٹ بال کا پہلا مقابلہ 25 اگست سے آج 29 اگست تک جاری رہا۔ اس مقابلے کوسعودی اسپورٹس فار آل فیڈریشن، سعودی ٹورزم اتھارٹی، وزارت کھیل اور سعودی عرب اوراولمپک کمیٹی کی طرف سے براہ راست تعاون حاصل رہا۔ یہ ٹورنامنٹ ’ایم ایس سی‘ کے ملکیتی کروزبحری جہاز "بیلیسیما" پر منعقد کیا گیا۔ یہ جہازجدہ اسلامی بندرگاہ سے روانہ ہونے والے مخصوص کروز ٹرپ پر بحیرہ احمر کے پانیوں میں گھومتا ہے۔

نیٹ بال ان سولہ فیڈریشنوں اور کمیٹیوں میں سے ایک ہے جن کا اعلان سعودی عرب کی اولمپک کمیٹی نے مئی 2021 میں کیا تھا۔ یہ ایک ایسا کھیل ہے جسے 80 ممالک میں 20 ملین سے زائد لوگ کھیلتے ہیں۔ یہ ٹورنامنٹ دو خواتین ٹیموں کے درمیان کھیلا گیا۔ کھلاڑیوں کی کل تعداد 16 تھی جن کی عمریں 13 سے 23 سال کے درمیان ہیں۔ خواتین نیٹ بال کھلاڑیوں نےالریاض کی گولڈن سپورٹس اکیڈمی میں تربیت حاصل کی۔ اس ٹورنامنٹ اورآنے والے مقابلوں کا مقصد سعودی عرب میں ’’نیٹ بال‘‘ کو معاشرے کے تمام افراد کے لیے دلچسپ ،مفید اور صحت مند سرگرمی کے طورپر متعارف کرانا اور اس میں شمولیت کی ترغیب دینا اور کھیلوں کی دنیا میں خدمات انجام دینے کےلیے شہریوں کی حوصلہ افزائی کرنا ہے۔

اس موقع پرنیٹ بال سعودی عرب کی چیئرپرسن شہزادی غادہ بنت عبداللہ آل سعود نے کہا کہ نیٹ بال سعودی عرب کے اسکولوں میں کھیلا جانے والا ایک عام کھیل ہے۔ یہ ایک ایسا کھیل ہے جس میں ہرعمر کے افراد حصہ لیتے ہیں۔ اسے اسکولوں میں بچوں کی جسمانی فٹنس اور ورش کے لیے بھی استعمال کیا جاتا ہے۔ اس کھیل میں حصہ لینے والے تمام کھلاڑیوں پر کھیل کے یکساں قوانین کا اطلاق ہوتا ہے۔ اس اعتبار سے یہ ایک مثالی کھیل ہے۔