.

ایران : وڈیو کلپ کے سبب موسیقی کے گروپ کے ارکان کی گرفتاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایران کے صوبے خوزستان کے شہر دزفول میں پولیس نے موسیقی کے ایک گروپ ’سل لا‘ کی وڈیو میں شریک تمام افراد کو طلب کر لیا ہے۔ وڈیو میں کئی نوجوان لڑکے اور لڑکیاں موسیقی کے تربیت کار پیمان یوسفی کی قیادت میں ایک دُھن بجاتے نظر آ رہے ہیں۔ وڈیو میں شریک افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔

وڈیو میں نظر آنے والی نوجوان لڑکیوں نے سر پر حجاب پہنا ہوا ہے اور سماجی دوری کا بھی خیال رکھا ہے۔

دزفول شہر کی پولیس کے سربراہ روح اللہ گروندی نے ذرائع ابلاغ کو بتایا کہ "موسیقی کے اس گروپ کے ارکان کے بارے میں جان کر 24 گھنٹے کے اندر انہیں طلب کر لیا گیا ،،، اس لیے کہ ہم دزفول شہر کی ساکھ اور تصویر مسخ کرنے کی اجازت ہر گز نہیں دیں گے. "

پولیس سربراہ کے مطابق اس وڈیو کو جس گھر میں بنایا گیا اس گھر کے مالک کو بھی طلب کر لیا گیا ہے۔

ایک ایرانی ویب سائٹ نے تبصرہ کرتے ہوئے لکھا ہے کہ یہ بات طے ہے کہ ایرانی پولیس کی جانب سے اس طرح کا اقدام ایران میں فن اور موسیقی کے جسد میں خنجر گھونپنے کے مترادف ہے۔