.

تاریخی جدہ کی ڈویلپمنٹ کے بعد شہرمیں سرمایہ کاری کے نئے امکانات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے تاریخی شہر جدہ میں آثار قدیمہ کی بحالی اورترقی کے بعد کاروباری شخصیات اور سرمایہ کاری کرنے والی کمپنیوں کی وہاں پر سرمایہ کاری میں دلچسپی بڑھ گئی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ جدہ کی ترقی کا منصوبہ تاجروں کو راغب کرنے کے لیے ایک اہم منزل ہے۔ اس منصوبے کا مقصد شہر کو ترقی دینا ، کاروباری اور ثقافتی منصوبوں کے لیے ایک پرکشش مرکز بنانا جو وژن 2030 کے مقاصد کے مطابق ہواور سعودی عرب کی عرب اور اسلامی گہرائی کو وژن کے ایک اہم ستون کے طور پرپیش کیا جا سکے۔

اس سلسلے میں سعودی عرب کی شوری کونسل کے ایک رکن فضل ابو العینین نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ تاریخی جدہ سائٹ ثقافتی جہتوں کے ساتھ ایک اہم ورثہ کا مقام ہے جس کی بحالی اس ورثے کے تحفظ اور دیکھ بھال میں اہم کردار ادا کرے گی۔ جدہ کے تاریخی مقامات نہ صرف سعودی عرب بلکہ عرب ، اسلامی اور بین الاقوامی دنیا کے نقشے پرغیرمعمولی اہمیت کے حامل ہیں۔یہ منصوبہ انٹرپرینیورشپ سے متعلق سرمایہ کاری کے دروازے کھولنے میں بھی اہم کردار ادا کرے گا۔

جدید تہذیبی ترقی

فضل العینین نے کہا کہ یہ پراجیکٹ جدید شہری ترقی کو متوازن بنائے گا جو کہ تاریخی ورثے کے مقامات کی ترقی کا باعث بنے گا۔ اس منصوبے سے جدہ کے متروک مقامات اور محلوں کی بحالی میں مثبت پیش رفت ثابت ہوگا اور ان کی زندگی کو بحال کرے گا۔ اس کی سیاحت اور ثقافتی اہمیت اور تخلیق کاروں اور ثقافت میں دلچسپی رکھنے والوں کو ایک جگہ اکٹھا کرنے کا ذریعہ بنے گا۔ جدہ کی ترقی اور اس کی بحالی کے بعد سرماریہ کاروں کو وہاں پر سرمایہ لگانے کے لیے ایک پرکشش ماحول فراہم کیا جاسکے گا۔