.

ریئل اسٹیٹ بروکری اور سینیما کی سیلز کے شعبوں میں 100% سعودائزیشن کا اطلاق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں ریئل اسٹیٹ اور سینیما گھروں سے متعلق پیشہ ورانہ سرگرمیوں کو سعودیانے کے حوالے سے انسانی وسائل اور سماجی بہبود کی وزارت کے فیصلے گذشتہ روز یکم اکتوبر سے نافذ العمل ہو گئے ہیں۔ فیصلوں کا اطلاق اس سلسلے میں دی گئی ڈیڈ لائن ختم ہونے پر کیا گیا ہے۔

ان فیصلوں کا مقصد سعودی عرب کے "ویژن 2030" کے اہداف کی روشنی میں مملکت کے مختلف علاقوں میں روزگار کے نئے مواقع فراہم کرنا اور مقامی مرد اور خواتین شہریوں کی معیشت میں شرکت کی شرح کو بلند کرنا ہے۔

عربی روزنامے الشرق الاوسط کے مطابق ریئل اسٹیٹ سیکٹر میں بروکریج کے میدان میں کام کرنے والوں کی سعودائزیشن کا تناسب 100% ہو گا۔ اسی طرح مملوکہ یا کرائے کی املاک میں پراپرٹی سے متعلق سرگرمیوں کے سلسلے میں کارکنان کی مجموعی تعداد پر 70% سعودائزیشن کا اطلاق ہو گا۔

فیصلے کے پہلے مرحلے میں سینیما کی سیلز کے شعبے کو 100% سعودیوں تک محدود کیا جائے گا۔ البتہ بعض تکنیکی اور معاونت کے امور میں استثنا پیش کیا جائے گا۔ اس استثنا کے تحت کسی بھی تنصیب میں غیر ملکیوں کی تعداد مجموعی کارکنان کی تعداد کے 15% سے زیادہ نہیں ہو گی۔