.

ریاض بک فیئر : العُلا کے بارے میں ضخیم ترین کتاب کی نمائش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی دارالحکومت میں جاری "ریاض انٹرنیشنل بک فیئر 2021" میں مملکت کے شہر العُلا سے متعلق سب سے بڑی کتاب نے لوگوں کی توجہ اپنی جانب مبذول کرا لی۔ کتاب کا وزن 70 کلو گرام ہے اور اسے فرانس کے "اسولین" پبلشنگ ہاؤس نے شائع کیا ہے۔ یہ پبلشنگ ہاؤس پہلی مرتبہ سعودی عرب میں کسی کتابی میلے میں شرکت کر رہا ہے۔

فرانس کے اس پبلشنگ ہاؤس کے ذمے دار ڈینی کے مطابق اس ضخیم کتاب کی تیاری میں دو سال سے زیادہ عرصہ لگا۔ کتاب کو سعودی عرب میں العُلا روئل کمیشن کے تعاون سے شائع کیا گیا ہے۔ کتاب کی تیاری میں قیمتی کاغذ استعمال کیا گیا ہے جو ہاتھوں سے بنایا جاتا ہے۔ کتاب کے موضوعات میں مرکزی حیثیت قدیم معموں سے بھرپور ایک آفاقی سفر اور العُلا کے سحر انگیز قدرتی عجائبات کو حاصل ہے۔

کتاب دو مختلف حجموں میں دستیاب ہے جس میں ایک بڑا اور ایک چھوٹا حجم ہے۔

واضح رہے کہ العُلا شہر کو دنیا میں سب سے بڑے اوپن ایئر میوزیم کا اعزاز حاصل ہے۔

کتاب میں مبہوت کر دینے والی تصاویر کا مجموعہ شامل ہے۔ یہ تصاویر عالمی فوٹوگرافر روبرٹ پالریڈی نے کیمرے میں محفوظ کیں۔ علاوہ ازیں معروف آرٹسٹ ایگنیسی مونریال کے فن پارے بھی کتاب کا حصہ ہیں۔ کتاب کی خاصیت یہ ہے کہ اس کا ہر صفحہ دیکھنے والے کو اپنے سحر میں گرفتار کر لیتا ہے۔

کتاب میں العُلا کے علاقے الحجر میں بڑے قبرستانوں کی تصاویر بھی شامل ہیں۔ ان کے علاوہ عظیم الجثہ پتھروں کی تصاویر جو گردش ایام کے ساتھ مختلف شکلوں میں تراشے گئے سنگ پاروں میں تبدیل ہو چکے ہیں۔ اسی طرح چٹانوں سے متعلق فن کی تصاویر اور خاکے اس علاقے میں ہزاروں برسوں کے دوران میں جانوروں کے حوالے سے ماحول ظاہر کرتے ہیں۔