.

سعودی عرب میں "اثراء" مرکز کی جانب سے پہلی مرتبہ بچوں کی کتابوں کی نمائش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں شاہ عبدالعزیز عالمی ثقافتی مرکز (اثراء) نے "بچوں کے لیے کتابوں کی نمائش" کے پہلے ایڈیشن کا آغاز کیا ہے۔ الشرقیہ صوبے میں یہ ایونٹ 11 سے 16 اکتوبر 2021ء تک بچوں کے مقابلے (أقرأ) کی سرگرمیوں کے ضمن میں ہے۔ ایونٹ میں بلجیئم بھی شریک ہے اور نمائش میں بچوں کے ادب کے حوالے سے بیلجیئم کا لٹریچر بھی پیش کیا گیا ہے۔ علاوہ ازیں نمائش میں بچوں کے ادب کے شعبے سے متعلق 10 مقامی ، علاقائی اور بین الاقوامی ناشرین بھی شریک ہیں۔

یہ نمائش 4 سے 14 برس کے بچوں کے لیے منعقد کی جا رہی ہے۔ اس سلسلے میں بچوں کی عمر کی مناسبت سے پروگرام ، سرگرمیاں ، ورک شاپس اور مختلف نوعیت کی ملاقاتوں کا انتظام کیا گیا ہے۔ ایونٹ کا مقصد بچوں میں مطالعے کا شوق ابھارنا ہے۔

اس حوالے سے اثراء مرکز میں پروگرام ڈائریکٹر ڈاکٹر اشرف فقیہ نے افتتاحی خطاب میں بتایا کہ نمائش کا مقصد ننھے قارئین کے تقاضوں کو پورا کرنا ہے۔

دوسری جانب سعودی عرب میں بیلجیئم کی خاتون سفیر ڈومینیک مینور کا کہنا تھا کہ "اثراء مرکز اپنی نوعیت کا منفرد کردار ادا کر رہا ہے۔ یہ مرکز سعودی عرب میں مخفی ثقافتی جواہر پر روشنی ڈال رہا ہے اور خداد داد صلاحیتوں کو اجاگر کر رہا ہے۔ میں اثراء مرکز کی جانب سے نوجوانوں میں مطالعے کی ثقافت مضبوط بنانے کو سراہتی ہوں"۔

خاتون سفیر نے اپنے خطاب میں سعودی عرب اور بیلجیئم کے بیچ تعلقات پر بھی بات کی جن کا آغاز 1919ء سے ہوا تھا۔ انہوں نے دونوں ملکوں کے بیچ مختلف شعبوں میں تعاون کا بھی ذکر کیا جس میں ثقافت کا پہلو شامل ہے۔

بچوں کی کتابوں کی نمائش میں ریتاج الحازمی بھی شریک ہوں گی۔ وہ دنیا میں کم عمر ترین ناول نگار ہونے کا اعزاز رکھتی ہیں۔ سعودی عرب سے تعلق رکھنے والی ریتاج بچوں کے سامنے اپنا تجربہ اور تاثرات پیش کریں گی۔