.

سعودی شہری کی طرف سے مسجد حرام کے ملازمین میں نقد رقوم کی تقسیم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر ایک ویڈیو وائرل ہو رہی ہے جس میں ایک مقامی سعودی شہری کو مسجد حرام میں حرم مکی کی صفائی کرنے والے رضا کاروں میں نقدم رقم تقسیم کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔

ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ ایک شہری مسجد حرام میں عازمین عمرہ کی خدمت کرنے اور مسجد حرام میں مختلف خدمات انجام دینے والے افراد میں نقد رقم تقسیم کر رہا ہے۔

سوشل میڈیا پروائرل ہونے والے اس کلپ پر شہریوں کی طرف سے رقم تقسیم کرنے والے شخص کی تحسین کی گئی ہے اور سماجی کارکنوں نے اسے حرم مکی کے رضا کاروں کی حوصلہ افزائی کی قابل تحسین کوشش قرار دیا ہے۔

سعودی عرب کی پریس ایجنسی’ایس پی اے‘ کے مطابق صدارت عامہ برائے امور حرمین شریفین نے مسجد حرام اور مسجد نبوی کو نمازیوں اور زائرین کے لیے مکمل طورپر کھول دیا ہے۔

ایجنسی برائے امور حرمین نے نمازیوں اور زائرین کی صحت کی حفاظت کے لیے متعدد پروگرامات، اقدامات اور وبا کی روک تھام کے لیے احتیاطی تدابیر کے مربوط نظام پر عمل درآمد شروع کیا ہے۔