.

مصر میں لرزہ خیز جرم، دلہن کا شادی کے تیسرے روز گلا کاٹ دیا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر میں گذشتہ ہفتے سامنے آنے والے ایک گھناؤنے جرم نے پوری قوم کو ہلا کر رکھ دیا۔ یہ افسوس ناک واقعہ ایک نئی نویلی دلہن کا ہے۔ اطلاعات کے مطابق ایک دُلہن کو اس کی شادی کے تیسرے دن یعنی 72 گھنٹے کے اندر اندر گلا کاٹ کر اور اسے شدید زخمی کرکے پھینک دیا گیا۔ لڑکی اس وقت شدید زخمی حالت میں کومے میں ہے۔ یہ واقعہ الدقھلیہ گورنری میں پیش آیا۔

مقامی میڈیا نے ہفتے کے روز رپورٹ کیا کہ ایک بہت بڑا معمہ اور پراسرار بن جانے والے اس جرم کی فوجداری تفتیش اورپبلک پراسیکیوشن کی جانب سے اس کی تحقیقات جاری ہیں۔ ابھی تک گھناؤنے واقعے میں ملوث عناصر کا پتا نہیں چلایا جاسکا۔

ایجنسیوں کو یہ بھی امید ہے کہ دُلہن جو کہ انتہائی نگہداشت کے کمرے میں کوما میں ہے کی حالت میں بہتری آئے گی، کیونکہ اپنے ساتھ بیتے جانے والے اس واقعے کے بارے میں وہی کچھ بتا سکتی ہے۔

چاقوکے حملوں سے جسم چور

میڈیا کے مطابق شوہر نے اپنے خاندان اور بیوی کے اہل خانہ کی مدد سے اسے الجمالیہ اسپتال منتقل کیا مگر حالت خراب ہونے کے باعث ڈاکٹروں نے اسے منصورہ کے ایمرجنسی یونیورسٹی اسپتال ریفر کر دیا۔

ایک طبی ذرائع نے بتایا کہ زخمی دلہن میں چھریوں کے زخموں سے چور ہے۔ اس کے سینے اور پیٹ کے علاوہ جسم کے نازک حصوں میں گہرے زخمی لگائے گئے ہیں۔ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ دلہن کے ہاتھ کی رگیں کٹ چکی ہیں اور انہیں بڑے پیمانے پر سرجری کی ضرورت ہے۔