.

سعودی عرب اور امریکی بحریہ کی مشترکہ مشقیں "بلیو ڈیفنڈر- 21" کا اختتام پذیر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب اور امریکا کی نیول فورسز کی مشترکہ مشقیں گذشتہ روز اختتام پذیر ہوگئیں۔

مخلوط بحری مشق "بلیو ڈیفنڈر - 21" رائل سعودی نیول فورسز اور امریکی نیوی نے بحیرہ احمر میں فوجی مشقیں کیں۔ مشقوں کی اختتامی تقریب میں مشقوں کے ڈائریکٹر ریئر ایڈمرل سعد الاحمری اور امریکا کی جانب سے نیول کرنل کارل ہیووڈ نے شرکت کی۔

مشقو کے ڈائریکٹر نے اختتامی تقریب سے خطاب میں کہا کہ ان مشقوں کا مقصد سعودی عرب اور امریکی بحری افواج کے درمیان تعلقات اور فوجی تعاون کو مضبوط بنانا، جنگی تیاریوں کو بہتر کرنا، بندرگاہوں کے تحفظ، زمین اور سمندروں کے اندر مائن کلیئرنس کے شعبے میں تجربات کا تبادلہ کرنا، بحیرہ احمر میں نیویگیشن کی آزادی کو یقینی بنانے کے لیے سمندروں اور علاقائی اور بین الاقوامی آبی گزرگاہوں کی حفاظتی صلاحیتوں کو فروغ دینا ہے۔

بریگیڈیئر جنرل الاحمری نے مزید کہا کہ مشقوں میں بہت سے منظرنامے کے پیش نظر دونوں ممالک کی مسلح افواج کے تجربات میں تبادلہ کیا گیا۔ مشقوں میں بحری یونٹس، امدادی کشتیوں، لینڈنگ بحری جہازوں اور ہیلی کاپٹروں کے ایک گروپ نے عملی آپریشنز اور ٹیکٹیکل مشقوں کا مظاہرہ کیا گیا۔