.

مارب میں یمنی فوج کے تابڑ توڑ حملے، حوثیوں کا بھاری نقصان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے صوبے مارب کے جنوب میں گذشتہ گھنٹوں کے دوران میں حوثی ملیشیا کو مختلف محاذوں پر شدید نقصان اٹھانا پڑا ہے۔

یمنی فوج نے آج ہفتے کے روز جاری ایک بیان میں بتایا کہ علی الصبح ہونے والی جھڑپوں میں حوثی ملیشیا کا بھاری جانی اور مادی نقصان ہوا۔

یمنی فوج کے میڈیا مرکز کے مطابق مارب کے جنوب میں عوامی مزاحمت کاروں اور یمنی فوج نے مل کر مختلف محاذوں پر باغیوں کے حملوں کو ناکام بنا دیا۔

مارب کے مغرب میں الکسارہ کے محاذ پر حوثیوں کا حملہ پسپا کر دیا گیا۔ اس دوران میں ایران نواز ملیشیا کے درجنوں ارکان ہلاک اور زخمی ہو گئے۔ علاوہ ازیں حوثیوں کی متعدد عسکری گاڑیاں اور لڑائی کا سامان تباہ ہو گیا۔

یمن میں آئینی حکومت کے حامی عرب اتحاد کے لڑاکا طیاروں نے مارب کے جنوب اور مغرب میں حوثی ملیشیا کے مختلف ٹھکانوں کو فضائی حملوں کا نشانہ بنایا۔ ان کے نتیجے میں درجنوں حوثی جنگجو ہلاک اور زخمی ہو گئے۔ علاوہ ازیں ایک ٹینک ، گولہ بارود کا ڈپو اور حربی ساز و سامان سے لدی تین گاڑیاں تباہ کر دی گئیں۔

یاد رہے کہ حوثی ملیشیا رواں سال فروری سے تزویراتی اہمیت کے حامل صوبے مارب پر حملے کر رہی ہے جو تیل کی دولت سے مالا مال ہے۔ البتہ مقامی قبائل اور یمنی فوج کی شدید مزاحمت کے باعث ایران نواز ملیشیا کی صوبے میں داخل ہونے کی کوشش ابھی تک کامیاب نہیں ہو سکی۔