.

ریستوران پر ہلہ بولنے کی ویڈیو وائرل، ملازمین پر تشدد کرنے والے گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں حکام نے اعلان کیا ہے کہ الریاض پولیس نے القویعیہ میں فاسٹ فوڈ چین کے عملے کو زد وکوب کرنے والے 5 افراد کو حراست میں لے لیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ریاض پولیس کے ترجمان خالد الکریدیس نے بتایا کہ سوشل میڈیا پر وڈیو وائرل تھی جس میں دیکھا جا سکتا تھا کہ القویعیہ کمشنری کی الخاصرہ تحصیل میں فاسٹ فوڈ چین کے کارکنان کو زد وکوب کیا جا رہا ہے۔
مارپیٹ کے دوران فاسٹ فوڈ چین کے دو غیر ملکی ملاِزم زخمی ہو گئے تھے۔

پولیس ترجمان نے بتایا کہ حملہ آوروں کو شناخت کرکے الخرج کمشنری سے گرفتار کیا گیا۔ پانچوں سعودی شہری ہیں۔ انہیں ابتدائی قانونی کارروائی کے بعد پبلک پراسیکیوشن کے حوالے کردیا گیا۔

سوشل میڈیا پر وائرل وڈیو میں دیکھا جا سکتا تھا کہ کئی نوجوان فاسٹ فوڈ چین میں داخل ہوئے اور انہوں نے عملے پر حملہ کیا، حملہ آوروں نے ایک اہلکار کو زمین پر پٹخ کر مکے مارے جس سے اہلکار بے ہوش ہو گیا۔

نوجوانوں کے دوسرے گروپ نے عملے کے دوسرے اہلکار کو بھی زد وکوب کیا۔

پبلک پراسیکیوٹر نے وڈیو وائرل ہونے پر حملہ آوروں کی گرفتاری اور انہیں پبلک پراسیکیوشن کے حوالے کرنے کے احکامات جاری کیے تھے۔