.
کرونا وائرس

’کرونا سے مہلک وبا سے متعلق امریکی ادارے کا انتباہ نئی بات نہیں‘

نئی وبا سے متعلق پیش گوئی پر سعودی وزارت صحت کا جواب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی وزارت صحت کے انڈر سیکرٹری برائے متعدی امراض عبداللہ عسیری نے امریکن اکیڈمی آف میڈیسن کی ممکنہ آنے والی وبائی بیماری کے بارے میں انتباہ پر تبصرہ کیا ہے جس میں خبردار کیا گیا ہے کہ ممکنہ نئی وبا کرونا سے بھی بدتر ہو سکتی ہے۔

اکیڈمی نے کا کہنا ہے کہ وبائی امراض کے نقطہ نظر سےکرونا لفظ وبائی مرض کے لیے کسی منظر نامے کی نمائندگی نہیں کرتا کیونکہ یہ وبا غیرمعمولی طورپرجان لیوا ثابت نہیں ہوئی۔ نئے انفلوئنزا سے تقریباً 33 ملین افراد کی ہلاکت کی توقع ہے۔

اپنی ٹویٹ میں عسیری نے کہا کہ امریکی انتباہ کوئی نئی بات نہیں ہے کیونکہ جب سے خدا نے زمین پر زندگی پیدا کی ہے تب سے وبائیں اور بیماریاں پھیل رہی ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ اکیڈمی کا کہنا ہے کہ 1919 کی انفلوئنزا وبا سے "COVID-19" کی نسبت زیادہ ہلاکتیں ہوئیں۔ ہم کہتے ہیں کہ اگر خدا کی مہربانی اور اس کی فراہم کردہ احتیاطی تدابیر اور ویکسین نہ ہوتیں تو کرونا وبا مزید پھیل چکی ہوتی اور 1919 کی وبائی بیماری سے بھی تباہ کن ثابت ہوتی۔