جدہ میں یاٹ کلب، سعودی عرب میں داخلے کی ایک سرکاری بندرگاہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

جدہ یاٹ کلب کے چیف مارکیٹنگ آفیسر خالد العریفی نے انکشاف کیا ہے ک یہ کلب 6 ماہ کے اندر بنایا گیا تھا۔ یہ کلب بحیرہ احمر کے ساحل کے ساتھ پہلی یاٹ مرینا ہونے کی وجہ سے دنیا کے باقی یاٹ کلبوں سے ممتاز ہے۔ یہ 120 میٹر تک کی میگا اور لگژری یاٹ کو ماحول دوست اور عالمی معیار کی سروس فراہم کرتا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کو دیے گئے ایک خصوصی بیان میں انہوں نے کہا کہ"جدہ یاٹ کلب مرینا کا ایک اہم فائدہ سعودی حکام کی جانب سے اسے سعودی عرب میں داخلے کی ایک سرکاری بندرگاہ کے طور پر تسلیم کرنا ہے۔ یہ واحد یاٹ کلب ہے جو کہ مختلف علاقوں سے آنےوالی کشتیوں کو کسٹم کلیئرنس اور امیگریشن کی خدمات فراہم کرتا ہے۔

بین الاقوامی تجربات

انہوں نے مزید کہا کہ جدہ یاٹ کلب کو مختلف سماجی، کھیلوں اور تفریحی سرگرمیوں کے ذریعے عالمی معیار کے تجربات فراہم کر کے سمندری جذبے اور طرز زندگی کو بحال کرنے کے لیے قائم کیا گیا تھا ،جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ کلب کے قیام کا مقصد ایک بڑا نیا پلیٹ فارم فراہم کرنا ہے۔ سعودی عرب نے کشتی رانی کے شعبے کی ترقی اور صحت مند زندگی اور کھیلوں کے ہر پہلو کے حوالے سے اسے آگے بڑھانے کا بیڑا اٹھا رکھا ہے۔

انہوں نے واضح کیا کہ جدہ گورنری ایک تاریخی گیٹ وے ہے جہاں دنیا بھر سے زائرین، خاص طور پر حجاج کرام آتے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ جدہ یاٹ کلب اس تاریخی مقام کو ایک منفرد سیاحتی گیٹ وے کے طور پر برقرار رکھے ہوئے ہے اور جدہ کو سیاحوں کے لیے ایک ممتاز مقام بنانے میں اپنا کردار ادا کرتا ہے۔

سمندری حیاتیاتی تنوع

خالد العریفی نے کہا کہ یہ منصوبہ سمندری حیاتیاتی تنوع کے تحفظ اور بحیرہ احمر کے ماحول کے تحفظ کے بارے میں شعور اجاگر کرنے میں معاون ثابت ہو گا تاکہ نوجوان نسلوں اور معاشرے کے لیے تعلیمی پروگراموں کے ذریعے ماحول کی دیکھ بھال اور اس سے لطف اندوز ہو سکیں۔

انہوں نے کہا کہ اس منفرد منصوبے کے ذریعے ہم اپنی مملکت کی خدمت کرنے اور سمندری سیاحت کے شعبے کو زندہ کرنے، اقتصادی ترقی میں حصہ ڈالنے، سعودی شہریوں کے لیے روزگار کے مواقع پیدا کرنے کے ذریعے وژن 2030 کی حمایت کرنے کے منتظر ہیں۔ اس کے علاوہ، ہمارا مقصد تفریح اور کھیلوں کے کلچر کو فروغ دینے اور ماحول کے تحفظ کے حوالے سے اہم کردار ادا کرنا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں