خلیج تعاون کونسل کا 42 واں سربراہ اجلاس آج ریاض میں ہو رہا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ریاض میں آج منگل کے روز 42 واں خلیجی سربراہ اجلاس سعودی عرب کی صدارت میں منعقد ہو رہا ہے۔ اجلاس میں خلیج تعاون کونسل کے چھ رکن ممالک کے سربراہ یا ان کے نمائندے شرکت کریں گے۔ اجلاس میں مشترکہ تعاون کو مضبوط بنانے ، چیلنجوں کا سامنا کرنے اور مستقبل پر مرکوز توجہ جیسے امور زیر بحث آئیں گے۔

سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان آل سعود کے مطابق یہ سربراہ اجلاس ایک اہم وقت پر منعقد ہو رہا ہے جب کہ خطے کو کئی چیلنجوں کا سامنا ہے۔

دو روز قبل ایک پریس کانفرنس میں سعودی وزیر واضح کر چکے ہیں کہ خلیجی قیادت حساس موضوعات کو زیر بحث لائیں گے۔ ان میں علاقائی امن ، مستقبل پر ارتکاز اور تعاون کے بندھنوں کو مضبوط تر بنانا شامل ہے۔ اس کا مقصد خلیجی ممالک کے یکجا سفر کو آگے بڑھانا اور خلیجی عوام کو فائدہ پہنچانا ہے۔

دوسری جانب خلیج تعاون کونسل کے سکریٹری جنرل نائف الحجرف کے مطابق خلیج تعاون کونسل کا سربراہ اجلاس تمام شعبوں میں تعاون کو مضبوط بنانے اور رکن ممالک کے شہریوں کی امنگوں کو پورا کرنے پر کام کرے گا۔

یاد رہے کہ سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے گذشتہ ہفتے خلیج تعاون کونسل کے تمام رکن ممالک کا دورہ کیا تھا۔ وہ اس دورے میں سلطنت عُمان ، امارات ، قطر ، بحرین اور پھر کویت گئے۔ دورے کا مقصد خلیج تعاون کونسل کے ممالک کی یک جہتی و یگانگت اور تزویراتی شراکت داری کی وسعت کو باور کرانا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں