.

شہزادی حصہ بنت سلمان کے ہاتھوں منی القصبی کے فن پاروں کی نمائش کا افتتاح

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں شہزادی حصہ بنت سلمان بن عبدالعزیز کی سرپرستی میں سعودی خاتون فن کار منی عبداللہ القصبی کی بنائی ہوئی تصاویر کی نمائش کا افتتاح ہوا۔ نمائش میں فنی اور ثقافتی اہمیت کے حامل متعدد فن پارے شامل ہیں۔

اس موقع پر شہزادی حصہ نے باور کرایا کہ فنون لطیفہ آج سعودی ثقافت کا ایک اہم حصہ بن چکے ہیں۔ موجودہ دور میں مملکت میں ان کا سنہرا وقت دیکھا جا رہا ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کی جانب سے حکومتی اداروں کی عمارتوں میں فن پاروں کی موجودگی کی منظوری ،،، مملکت کے ویژن 2030 پروگرام کا حصہ ہے۔

شہزادی حصہ کے مطابق آج مملکت کے تمام صوبوں میں فن اور فن پارے نظر آ رہے ہیں اور یہ عمومی فضا تمام لوگوں پر مثبت طور پر اثر انداز ہو رہی ہے۔

شہزادی حصہ نے باور کرایا کہ فن ،،، فکر اور ثقافت کو جلا بخشنے کا ایک اہم ذریعہ ہے۔ شہزادی نے ملک کے تمام فرزندان اور دختران کے حوالے سے اس آرزو کا اظہار بھی کیا کہ وہ مملکت سعودی عرب کو ایسا بنائیں گے کہ وہ دنیا بھر کے لیے اس پاکیزہ دین اور روحانیات کے ساتھ ساتھ سائنس و ٹکنالوجی ، سلامتی اور محبت کے حوالے سے بھی روشن چراغ ثابت ہو۔

شہزادی حصہ نے اپنے خطاب میں کہا کہ "محترمہ منی القصبی کے فن پاروں کی چوتھی نمائش کا افتتاح کرنا میرے لیے اعزاز کی بات ہے۔ منی القصبی مملکت میں خواتین کے لیے فنون لطیفہ کے میدان میں سرخیل شخصیات میں سے ہیں۔

اس موقع پر خاتون فن کار منی القصبی نے اپنی چوتھی ذاتی نمائش کی سرپرستی پر شہزادی حصہ بن سلمان کا خصوصی شکریہ ادا کرتے ہوئے اسے گراں قدر قرار دیا۔ منی کے مطابق کسی بھی فن کار کے لیے یہ حسین ترین لمحات ہوتے ہیں جب اس کی ذاتی نمائش کے اففتاح کے موقع پر چاہنے والے اور فنون لطیفہ میں دل چسپی رکھنے والے افراد موجود ہوں۔

مقبول خبریں اہم خبریں