سعودی عرب میں روزانہ 9 ملین کیوبک میٹر صاف پانی کی پیداوار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب میں صاف پانی کی پیداوار یومیہ 9 ملین کیوبک میٹر سے زیادہ ہو گئی ہے۔ نمکین پانی کی تبدیلی کا حصہ 65 فیصد سے زیادہ یا 6 ملین کیوبک میٹر یومیہ سے زیادہ ہے جب کہ نجی شعبے کی پیداوار تقریباً 3 فیصد ہے یعنی ملین کیوبک میٹر ہے۔ سعودی عرب میں 2025 میں صاف شدہ پانی کی پیداوار 14 ملین کیوبک میٹر یومیہ سے زیادہ ہو جائے گی جس میں سے 7.3 ملین کیوبک میٹر جنرل واٹر کنورشن کارپوریشن اور 7 ملین کیوبک میٹر نجی شعبے کے پلانٹس سے آئے گی۔

اس بات کا انکشاف سعودی عرب میں ماحولیات، پانی اور زراعت کے نائب وزیر انجینیر منصور المشیطی نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ سعودی عرب نے تقریباً پچاس سال قبل صاف پانی پر انحصار شروع کیا تھا۔ صحرائی زمین ہونے کی وجہ سے سعودی عرب کو کھارے پانے کو صاف کرنے کی زیادہ ضرورت رہی ہے اور وقت کے ساتھ ساتھ مملکت میں پانی کی ضرورت اور کھپت میں مسلسل اضافہ ہوتا رہا ہے۔

منصور المشيطي
منصور المشيطي

المشیطی نے کہا کہ سعودی عرب دنیا میں نمکین پانی کی پیداوار میں سب سے آگےہے اور نمکین پانی کی تبدیلی کارپوریشن کو سعودی حکومت کی طرف سے زبردست تعاون حاصل ہے،کیونکہ پانی اقتصادی اور سماجی ترقی کا سب سے اہم ذریعہ ہے۔ کارپوریشن نے حال ہی میں بہت سی نمایاں کامیابیاں حاصل کی ہیں جن میں دنیا میں سب سے کم بجلی کی کھپت کے ساتھ صاف پانی کی پیداوار کے نظام کی تعمیر، نیز زیرو- سلین ریفلکس ٹیکنالوجی کا استعمال ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں