اگمینیٹڈ ریئلٹی ٹیکنالوجی کی مدد سے اسلامی ادوار کے سکوں کی نمائش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ریاض میں شاہ عبدالعزیز پبلک لائبریری کے زیراہتمام شاہ عبدالعزیز ہسٹوریکل سینٹر میں المربع برانچ میں آرٹس ہال میں "اسلامی سکوں اور نایاب سکے تھرو دی ایجز" کے نام سے ایک ورچوئل نمائش کا افتتاح کیا۔

اس نمائش میں لائبریری کے نایاب اسلامی اورعربی سکوں کے ساتھ مختلف مراحل میں سعودی سکے بھی شامل ہیں۔

اس لائبریری کے پاس 8000 سے زیادہ سکےموجود ہیں جو اموی، عباسی، اندلس، فاطمی، ایوبی، اتابک، سلجوق، مملوک اور عثمانی دور سے تعلق رکھتے ہیں۔ لائبریری کا ذخیرہ اسلامی مشرق اور مغرب ممالک سے آتا ہے۔ اس میں کچھ تہذیبوں سے تعلق رکھنے والے سکے بھی شامل ہیں جو جزیرہ نما عرب میں مکہ، مدینہ، یمامہ، بیشہ اور دیگر شہروں میں بنائے گئے تھے۔

شاہ عبدالعزیز پبلک لائبریری کے جنرل سپروائزر، فیصل بن معمر نے کہا کہ "ورچوئل نمائش اسلامی سکوں اور نایاب سکوں کی نمائش کی توسیع ہے"۔ یہ کام لائبریری کی نمائشوں میں ایک معیاری جست ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں