سعودی عرب کے مختلف علاقوں میں گردوغبار کی پیش گوئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے محکمہ موسمیات نےآئندہ چوبیس گھنٹوں کے دوران مملکت کے مختلف علاقوں میں گردو غبار کے ساتھ تیز ہوائیں چلنے کی پیش گوئی۔ دوسری طرف سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو کلپ وائرل ہو رہا ہے جس میں مملکت کے علاقوں میں گردو غبار کے طوفان کو دیکھا جا سکتا۔

اس سلسلے میں محکمہ موسمیات کے سرکاری ترجمان حسین القحطانی نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو انکشاف کیا کہ گردو غبار کی لہر جاری ہے اورمملکت کی فضائی حدود موسمیاتی اعتبار سے موسم بہار میں داخل ہو رہی ہے جو کہ ایک عبوری مرحلہ ہے.اس موسم میں سعودی عرب میں درجہ حرارت کا اتار چڑھاؤ جاری رہتا ہے۔ خاص طور پر وسطی اور مشرقی علاقے، جنوبی اندرونی علاقوں بہ شمول نجران، شرورہ اورآس پاس کے علاقوں میں گردو غبار گرد آلود ہوائیں چلتی ہیں۔

القحطانی نے آئندہ ہفتے بھی ایسی صورت حال کے دوبارہ ہونے کی توقع ظاہر کی اور صورتحال کو معمول کے مطابق قرار دیا۔ انہوں نے وسطی علاقے، ریاض، حائل، پہاڑی علاقوں اور مکہ مکرمہ سمیت مملکت میں مارچ اور اپریل کے آخر میں بارشوں کی توقع ظاہر کی ہے۔ اس حوالے سےمحکمہ موسمیات کا قومی مرکزایک ضمنی رپورٹ جاری کرے گا جس میں یہ مملکت کے علاقوں میں موسم کے اتار چڑھاؤ کا امکان ہے۔

انہوں نے کہا کہ موسم بہار کا ماحول ایک عبوری سیزن ہے جس میں ہم موسمیاتی طور پر جولائی کے شروع میں اور 20 جولائی کو فلکیاتی طور پر موسم گرما کے موسم تک پہنچنے کی تیاری کرتے ہیں۔ موسم بہار میں درجہ حرارت میں اضافہ شروع ہوتا ہے۔

قابل ذکر ہے کہ مملکت کے کئی علاقوں میں گردو غبار کی لہریں جمعہ کو مقامی وقت کے مطابق دس بجے سامنے آئیں۔ شمالی اور شمال مغربی سمت سے آنے والی ان ہواؤں کے ساتھ گرد وغبار بھی دیکھا گیا۔ اس کے علاوہ الخرج، داودمی، عرعر، سکاکا، رفحا، القریات، طریف اور الاحساء سمیت کئی شہروں میں نچلی سطح کی ہوائیں چلنے کی اور ٹریفک کے لیے وژن متاثر ہونے کی توقع ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں