یمن اور حوثی

یمن : مخالفین کی املاک ہتھیانے کے لیے حوثیوں کی لوٹ مار مہم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

یمن میں ایران نواز حوثی ملیشیا نے المحویت صوبے میں آئینی حکومت کے ہمنوا شہریوں اور مزاحمتی رہ نماؤں کے خلاف وسیع پیمانے پر مہم شروع کر رکھی ہے۔ اس دوران میں مذکورہ افراد کے گھروں اور املاک کو قبضے میں لیا جا رہا ہے۔

مقامی ذرائع کے مطابق حوثی کمانڈر خالد الخزان نے نگرانوں کی ایک کمیٹی تشکیل دی ہے جو صوبے کے اضلاع میں یہ مہم چلا رہی ہے۔

انسانی حقوق اور آزادی پر نظر رکھنے والی ایک تنظیم 32 سے زیادہ واقعات کی تصدیق میں کامیاب ہو گئی جن میں المحویت صوبے میں لوگوں کی نجی املاک ، گھروں ، سواریوں اور مالی رقوم کو ضبط کر کے لوٹ لیا گیا۔ حوثی ملیشیا نے صوبے میں شہریوں اور ملیشیا کے مخالفین کے خلاف منظم طور پر یہ کارروائیاں انجام دیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کو موصول ہونے والے ایک بیان میں مذکورہ تنظیم نے وسیع پیمانے پر انسانی حقوق کی ان خلاف ورزیوں کی مذمت کی۔ تنظیم نے حوثی ملیشیا سے مطالبہ کیا کہ ان پامالیوں کو روک دیا جائے جو یمن کے آئین اور جنیوا کنونشن سمیت تمام بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی ہے۔

واضح رہے کہ حوثی ملیشیا مختلف علاقوں میں اپنے مخالفین کو لوٹ مار کا نشانہ بنانے کے واسطے قوانین کو استعمال کرتی ہے۔ اس سلسلے میں دیگر ہتھکنڈوں کے ساتھ "عدالتی پہرے" کی اصطلاح کا بھی سہارا لیا جاتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں