تبوک : 2 بچوں کے ڈوب کر جاں بحق ہونے کی سرکاری تحقیقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب میں استغاثہ نے تبوک صوبے میں دو بچوں کے ڈوب کر جاں بحق ہونے کے واقعے کی تحقیقات کا اعلان کیا ہے۔ یہ واقعہ اتوار کے روز ایک زیر تعمیر سرنگ میں پیش آیا تھا۔

اس سے قبل تبوک صوبے کے گورنر شہزادہ فہد بن سلطان بن عبدالعزیز نے واقعے کی تحقیقات کے لیے ایک خصوصی کمیٹی تشکیل دینے کی ہدایت جاری کی تھی۔ یہ کمیٹی صوبے کے سکریٹریٹ ، شہری دفاع اور افرادی قوت و سماجی بہبود کی وزارت کے افراد پر مشتمل ہے۔

واضح رہے کہ شہری دفاع کی ٹیموں نے اتوار کے روز مغرب کے بعد پہلے بچے کی لاش نکالی۔ اس کے چند گھنٹوں بعد اسی جگہ سے دوسرے بچے کی لاش مل گئی۔ دونوں بچوں کے اہل خانہ نے ان کے لا پتہ ہونے کی اطلاع دی تھی۔

بظاہر یہ معلوم ہوتا ہے کہ دونوں بچوں نے زیر تعمیر سرنگ کے اندر جمع شدہ پانی میں تیرنے کی کوشش کی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں