سیناء میں دراندازی کرنے والا داعشی ہلاک، حماس کے سینئر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

داعش تنظیم نے مصر کے علاقے سیناء میں اپنے ایک رکن کے مارے جانے کا اعلان کیا ہے۔ یہ داعشی سیناء میں دراندازی کی کوشش کر رہا تھا۔

سیناء میں قبائلی ذریعے نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ مصعب جمیل مطاوع فلسطینی ہے اور اس کا تعلق غزہ کی پٹی سے ہے۔ وہ حماس تنظیم کے ایک سینئر رہ نما کا بیٹا تھا اور القسام بریگیڈز کا جنگجو رہ چکا ہے۔

ذرائع کے مطابق مصعب جمیل حماس تنظیم سے منحرف ہو کر داعش تنظیم میں شامل ہو گیا تھا۔

قبائلی ذرائع نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ سیناء کے قبائلی اتحاد کے افراد اور گروہوں نے رفح شہر کے جنوب مشرق میں واقع علاقے "شیبانہ" میں اُن بعض ٹھکانوں کا محاصرہ کر لیا جہاں داعشی عناصر روپوشی اختیار کرتے ہیں۔ ان ٹھکانوں کے اطراف مسلح جھڑپیں ہوئیں۔ ان کے نتیجے میں 3 داعشی ہلاک ہو گئے اور دیگر پکڑے گئے۔ اس دوران میں دو قبائلی ارکان بھی اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے اور ایک زخمی ہو گیا۔

سیناء میں قبائلی ذرائع نے گذشتہ برس دسمبر میں دو خطرناک دہشت گردوں کا خاتمہ کرنے کا اعلان کیا تھا۔ یہ دونوں افراد دہشت گرد کارروائیوں کا ارادہ رکھتے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں