سعودی ولی عہد کی یمنی صدارتی لیڈرشپ کونسل کے سربراہ اور ارکان سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے آج جمعرات کے روز یمن کی صدارتی لیڈرشپ کونسل کے سربراہ ڈاکٹر رشاد العلیمی اور کونسل کے دیگر ارکان سے ملاقات کی۔ ولی عہد نے اس موقع پر کونسل کے لیے مملکت کی سپورٹ کا اظہار کیا۔ انہوں کہا کہ وہ امید کرتے ہیں کہ کونسل کی تاسیس یمن میں ایک نئے باب کا آغاز ہے جو ملک کو جنگ سے نکال کر امن اور ترقی کے راستے پر منتقل کر دے گا۔

ملاقات میں سعودی عرب کے نائب وزیر دفاع شہزادہ خالد بن سلمان ، وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان ، وزیر مملکت کابینہ کے رکن اور قومی سلامتی کونسل کے مشیر ڈاکٹر مساعد بن محمد العیبان ، ریاستی سکورٹی کے سربراہ عبدالعزیز الہویرینی ، جنرل انٹیلی جنس کے سربراہ خالد حمیدان اور یمن میں سعودی عرب کے سفیر محمد آل جابر بھی موجود تھے۔

اس سے قبل یمن کے صدر عبدربہ منصور ہادی نے آج جمعرات کی صبح دو اہم فیصلوں کا اعلان کیا۔ انہوں نے یمن کے نائب صدر علی محسن الاحمر کو برطرف کر دیا۔ مزید یہ کہ ملک میں ایک "پریذیڈینشل لیڈرشپ کونسل" تشکیل دے کر صدر کے تمام اختیارت کونسل کے حوالے کر دیے ہیں۔ صدارتی بیان میں واضح کیا گیا ہے کہ نئی صدارتی کونسل پوری عبوری مدت میں ریاست کے سیاسی ، عسکری اور سیکورٹی انتظامی امور سنبھالے گی۔ سرکاری خبر رساں ایجنسی (سبا) کے مطابق صدارتی کونسل فائر بندی کے حوالے سے حوثیوں کے ساتھ مذاکرات کی بھی ذمے داری نبھائے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں