7500 اسپیکروں پر مشتمل مسجد حرام کا ساؤنڈ سسٹم دنیا کا سب سے بڑا صوتی نظام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

مسجد حرام میں موجود ساؤنڈ سسٹم دنیا کے سب سے بڑے اورصوتی نظاموں میں سے ایک ہے۔ اس سسٹم میں 7500 اسپیکرمنسلک ہیں جو مسجد حرام میں اذان اور نماز کی آواز کو حرم مکی کے اندر اور باہر منتقل کرتے ہیں۔

مسجد حرام کے آپریشن اور مینٹیننس ڈیپارٹمنٹ میں الیکٹرانک بزنس ڈیپارٹمنٹ کے ڈائریکٹر انجینیر سعید العمری نے وضاحت کی کہ مسجد میں آڈیو سسٹم دنیا کے سب سے بڑا اور سب سے ضخیم ساؤنڈ سسٹم ہے۔ یہ نظام انتہائی احتیاط اور مہارت کے ساتھ ترتیب دیا گیا ہے۔جگہ کی ضرورت کے پیش نظر جدید صوتی آلات نصب کیے گئے ہیں اور اس نظام کی روزانہ کی بنیاد پردیکھ بھال اور انتظام اعلیٰ ترین سطح پر تربیت یافتہ ماہرین کے ذریعے کیا جاتا ہے، تاکہ آڈیو سگنل اس سسٹم کے ذریعے بیت اللہ میں آنے والے تمام زائرین تک پہنچ سکیں۔

انہوں نے اس بات پر بھی زور دیا کہ مسجد حرام میں آڈیو سسٹم کی کوریج محفوظ اور انتہائی موثر ہے جس میں خرابی کا امکان بہت کم ہے۔ مسجد میں آواز کی حساسیت کے لیے ایک بنیادی، بیک اپ اور ایمرجنسی سسٹم موجود ہے اور بنیادی نظام میں خرابی کی صورت میں غیر محسوس طریقے سے بیک اپ سسٹم پر منتقل ہوجاتا ہے۔مرمت کے بعد اسے دوبارہ پہلے سسٹم پر منتقل کردیا جاتا ہے۔ تمام آڈیو مقامات کے لیے بجلی کی بندش کو یقینی بنانے کے لیے پورا آڈیو سسٹم اعلیٰ صلاحیت والے UPSs سے منسلک ہے۔

العمری نے کہا کہ ان سسٹمز کے انجینیرز، ٹیکنیشنز، سپروائزرز اور آپریٹرز کے 65 سے زیادہ خصوصی آپریشنل ماہر موجود ہیں جو آواز کو صاف اور واضح طورپر حرم مکی کے تمام مقامات اور سامعین تک پہنچانے میں مصروف عمل رہتے ہیں۔ مسجد حرام کے ساؤنڈ سسٹم کو ایک مرکزی آپریشنل کنٹرول روم سے کنٹرول کیا جاتا ہے۔ حرم مکی میں کہیں بھی آواز کی خرابی کی صورت میں عملہ ایک دوسرے کے ساتھ انٹر کام کے ذریعے رابطے میں رہتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ مسجد حرام کا الیکٹرانک صوتی سسٹم اعلی درستگی کی خصوصیت رکھتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں