اسرائیل کا راکٹ داغے جانے کے جواب میں غزہ کی پٹی پرفضائی حملہ: حماس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی فوج نے منگل کوعلی الصباح غزہ کی پٹی پر فضائی حملہ کیا ہے۔صہیونی فوج نے فلسطینی علاقے سے اسرائیل کے جنوبی علاقوں کی جانب راکٹ داغے جانے کے بعد یہ فضائی بمباری کی ہے۔

عینی شاہدین نے بتایا ہے کہ اسرائیلی طیاروں نے غزہ کی پٹی کے جنوبی علاقے میں بمباری کی ہے جبکہ حماس کے عسکری ونگ نے اعلان کیا کہ اس نے اسرائیلی لڑاکا جیٹ پراپنے طیارہ شکن نظام سے جوابی فائرنگ کی ہے۔

حماس کے ترجمان حازم قاسم نے ایک بیان میں دعویٰ کیا ہے کہ اسرائیلی طیاروں نے’’خالی مقامات‘‘ کو نشانہ بنایا ہے۔

غزہ میں عینی شاہدین اور سکیورٹی ذرائع نے اس حملے میں کسی کے زخمی ہونے کی اطلاع نہیں دی۔اس سے قبل اسرائیل کے ’’آئرن ڈوم‘‘فضائی دفاعی نظام نے غزہ سے اسرائیلی علاقے کی جانب چلائے گئے راکٹوں کو روک لیا تھا۔

اسرائیلی فوج نے کہا کہ اس حملے کے جواب میں اس کے لڑاکا طیاروں نے غزہ کی پٹی میں حماس کے اسلحہ سازی کے ایک مقام پرحملہ کیا ہے۔

راکٹ حملہ اور جوابی فضائی حملہ مقبوضہ بیت المقدس (یروشلم) میں مسجد اقصیٰ کے احاطے اور اس کے آس پاس اسرائیلی سکیورٹی فورسز اورفلسطینیوں کے درمیان تشددآمیز واقعات کے بعد کیا گیاہے۔ مقبوضہ بیت المقدس میں گذشتہ چار روز میں تشدد کے واقعات میں 170 سے زیادہ افراد زخمی ہوئے ہیں۔ان میں زیادہ تر فلسطینی مظاہرین تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں