یمن اور حوثی

الرقو کے واقعے کے حوالے سے حوثیوں کا دعویٰ جھوٹا ہے: عرب اتحاد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن میں آئینی حکومت کے حامی عرب اتحاد نے باور کرایا ہے کہ سرحدی علاقے الرقو میں سعودی فوج کے ہاتھوں یمنی شہریوں کی ہلاکتوں کے حوالے سے حوثی ملیشیا کا دعویٰ بے بنیاد ہے۔

جمعرات کی شام جاری بیان میں اتحاد کا کہنا ہے کہ حوثیوں کی جانب سے جبری ہجرت کی کارروائی اور مسلح جھڑپوں میں درجنوں مہاجرین اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے۔

اتحاد کے مطابق حوثیوں کی وحشیانہ کارروائی اختلافات اور مہاجرین کے گھروں کو آگ لگانے کے بعد سامنے آئی۔

اتحاد کی قیادت نے اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ حوثیوں کے ہاتھوں مہاجرین کے خلاف انسانی حقوق کی وحشیانہ خلاف ورزیوں کے انکشاف کے لیے اپنی ذمے داری پوری کرے۔

اس سے قبل مارچ 2021ء میں دارالحکومت صنعاء میں حوثیوں کے زیر انتظام حراستی مرکز میں آگ بھڑکنے کے سبب افریقی مہاجرین اور پہرے داروں سمیت 150 سے زیادہ افراد فوت ہو گئے تھے۔ حوثیوں نے جل کر مرنے والوں کی لاشوں کو راتوں رات دفنا دیا اور اس حوالے سے کوئی معلومات پیش نہیں کی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں