امریکی وزیر دفاع کی طرف سے خصوصی گرانٹ حاصل کرنے والی بسمہ کون ہیں؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

بیرون ملک زیرتعلیم سعودی خواتین کی کامیابیوں کے سلسلے میں ایک نئی سائنسی اورعلمی کامیابی الجوف یونیورسٹی کی ایک سعودی طالبہ کےحصے میں آئی ہے۔ یہ کامیابی امریکی وزیر دفاع کی طرف سے سعودی طالبہ کو ایک ریسرچ گرانٹ کی فراہمی ہے۔ امریکی وزیر دفاع کی طرف سے سعودی طالبہ کو یہ گرانٹ بیرون ملک سعودی طلبہ کی کامیابی اور مملکت کے لیے اعزاز ہے۔

یہ ریسرچ گرانٹ اسکالرشپ کی طالبہ بسمہ الخنجر کو دیا گیا ہے۔ یہ گرانٹ اسکالرشپ پرآنے والی سعودی خواتین کی شاندار کامیابیوں میں ایک نیا اضافہ ہے۔اس سے یہ ثابت ہو رہا ہے کہ سعودی خواتین بیرون ملک اپنا علمی اور سائنسی سکہ منوا رہی ہیں۔

بسمہ الخنجر نے ’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ کو بتایا کہ ان کی تحقیق کوامریکی وزیر دفاع کے دفتر کی جانب سے امریکا میں ان کی موجودہ یونیورسٹی میں فنڈ فراہم کرنے والے ایک تحقیقی گروپ کے اندر شامل کیا گیا تھا، یہ گرانٹ سب سے اہم ہے۔

بسمہ الخنجر
بسمہ الخنجر

اُنہوں نے اس بات پر زور دیا کہ اس سے اس کی تحقیق کی قدر میں اضافہ ہوگا اور سعودی طالبہ کوتحقیقی تجربات میں آلات اور دیگر ضروریات کے حصول میں مدد ملے گی۔

بسمہ نے بتایا کہ میرے ڈاکٹریٹ سپروائزر نے مجھ سے رابطہ کیا۔ انہوں نے مجھے بتایا کہ آپ کو امریکی زیردفاع کی طرف سے فراہم کی جانے والی گرانٹ میں شامل کیا گیا ہے۔ ڈاکٹریٹ محقق نے کہا کہ مُجھے سیکیورٹی کے شعبے میں ریسرچ کے لیے اس کا انتخاب اس لیے کیا گیا کیونکہ اس وقت یہ دنیا کا سب سے بڑا ریسرچ فیلڈ ہے۔

اُنہوں نے مزید کہا کہ "میرے اور میرے سپروائزر کے درمیان تحقیق اور طویل بحث کے بعد یہ نتیجہ اخذ کیا گیا کہ تحقیق کے لحاظ سے میدان جنگ میں آلات اور فوجیوں کی جگہوں کی حفاظت کرنا، یقیناً اس کا حق نہیں دیا گیا، اور یہ کہ اس میں کمی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ سیکیورٹی ریسرچ کے میدان میں مزید سائنسی تحقیق وقت کی ضرورت ہے‘‘۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں